نواز شریف کیخلاف نئے ریفرنس،شہباز شریف کوجیل میں بی کلاس دینے کا فیصلہ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

نواز شریف کیخلاف نئے ریفرنس

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز) چئیرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کے زیر صدارت ہونے

والے اجلاس میں سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کیخلاف نیا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دیدی

ہے۔قومی احتساب بیورو (نیب) کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف، فواد

حسن فواد اور آفتاب سلطان کے خلاف سیکیورٹی گاڑیوں کا ریفرنس دائر ہوگا۔اعلامیہ میں کہا گیا

ہے کہ 73 سیکیورٹی گاڑیوں کے غیر سرکاری استعمال سے خزانے کو پونے دو ارب روپے کا

نقصان ہوا۔ اجلاس میں مسلم لیگ (ن) کے رہنما احسن اقبال کے خلاف بھی کرپشن ریفرنس دائر

کرنے کی منظوری دی گئی۔احسن اقبال کیخلاف نارووال سپورٹس سٹی ریفرنس دائر ہوگا۔ اس کے

علاوہ لیگی رہنما رانا ثناء اللہ اور تحریک انصاف کے سینئر صوبائی وزیر عبدالعلیم خان کیخلاف بھی

کرپشن کی تحقیقات کی منظوری بھی دیدی گئی ہے۔اس موقع پر اجلاس سے خطاب میں چیئرمین

جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ نیب کا ایمان کرپشن فری پاکستان ہے۔ میگا کرپشن کیسز کو

منطقی انجام تک پہنچانا قومی ادارے کی اولین ترجیح ہے۔چیئرمین نے واضح کیا کہ قومی احتساب

بیورو (نیب) کا تعلق کسی جماعت یا گروہ سے نہیں بلکہ ریاست پاکستان سے ہے۔ مفرور اور

اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کیلئے اقدامات اٹھائے جائیں۔ بدعنوان عناصر کو انصاف کے کٹہرے

میں کھڑا کیا جائے گا۔نیب تفتیشی ٹیم نے نارووال سپورٹس سٹی کیس میں لیگی رہنما احسن اقبال

کیخلاف ریفرنس تیار کرلیا۔گی۔دوسری طرف منی لانڈرنگ کیس میں احتساب عدالت نے شہباز شریف

کی بیٹی رابعہ عمران کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز کر دیا۔منی لانڈرنگ کیس میں

شہباز شریف فیملی کی مشکلات بڑھنے لگیں۔ احتساب عدالت نے شہباز شریف کی بیٹی رابعہ

عمران کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز کردیا۔ نیب کے تفتیشی افسر نے شہباز شریف

کی بیٹی رابعہ عمران کی رہائش گاہ اور عدالت کے باہر نوٹس چسپاں کر دئیے۔عدالتی حکم کے

باوجود پیش نہ ہونے پر رابعہ عمران کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کی گئی ہے۔

احتساب عدالت کے ایڈمن جج جواد الحسن نے شہباز شریف کی بیٹی کے خلاف کارروائی کا آغاز

کیا ہے۔دریں اثنا اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو کوٹ لکھپت جیل میں بی کلاس دینے کا فیصلہ کرلیا

گیا ، جس کے بعد انھیں جیل میں کرسی، میٹرس،ٹیبل اور گھرسے کھانا،ادویات لانے کی اجازت ہو

گی۔ تفصیلات کے مطابق محکمہ داخلہ کے ذرائع نے کہا ہے کہ اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو جیل

میں بی کلاس دینے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے ، شہباز شریف کو جیل میں کرسی، میٹرس،ٹیبل اور

گھرسے کھانا،ادویات لانے کی اجازت ہو گی۔ ذرائع کے مطابق محکمہ داخلہ کی جانب سے شہباز

شریف کو جیل میں بی کلاس دینے کا فیصلہ جیل رولز1978 کے تحت کیا گیا۔

نواز شریف کیخلاف نئے ریفرنس

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply