President-of-Pakistan-Dr,Arif-Alvi

شعبہ تعلیم میں تفریق ختم کرنے کیلئے یکساں قومی نصاب کا نفاذ ناگزیر، صدر مملکت

Spread the love

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن ایجوکیشن نیوز) یکساں قومی نصاب

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے تعلیمی شعبے میں تفریق ختم کرنے کیلئے

یکساں قومی نصاب کا نفاذ یقینی بنانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ

طلبہ میں کردار سازی، تنقیدی اور تخلیقی سوچ فروغ دینے پر توجہ مرکوز کی

جائے، ملکی سماجی و اقتصادی ترقی کیلئے معیاری اور تحقیق پر مبنی تعلیم دینا

ضروری ہے۔ صدر مملکت یہاں ایوانِ صدر میں وفاقی تعلیم و پیشہ ورانہ تربیت

کی جانب سے یکساں قومی نصاب پر بریفنگ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

==-== یہ بھی پڑھیں: یکساں نظام تعلیم نفاذ، پنجاب حکومت کا بڑا فیصلہ

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے اجلاس میں تعلیم کی اہمیت کو اجاگر کرتے

ہوئے کہا ملک کی سماجی و اقتصادی ترقی کیلئے معیاری اور تحقیق پر مبنی تعلیم

دینا ضروری ہے۔ تعلیمی شعبے میں تفریق ختم کرنے کیلئے ایک ہی قومی نصاب

کا نفاذ یقینی بنانا ہوگا، طلبہ میں کردار سازی، تنقیدی اور تخلیقی سوچ فروغ دینے

پر توجہ مرکوز کرنے کی ضرورت ہے۔ وزارت وفاقی تعلیم و پیشہ ورانہ تربیت

کی جانب سےصدر مملکت کو یکساں قومی نصاب کی تیاری پر بریفنگ دی گئی۔

بریفنگ میں بتایا گیا ایک قومی نصاب نجی شعبے، دینی مدارس سمیت تمام

وفاقی اکائیوں اور متعلقہ سٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے تیار کیا گیا ہے۔

=قارئین=: خبر اچھی لگے تو شیئر، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

قومی نصاب ملک کی تعلیمی ضروریات کیلئے بین الاقوامی معیار کے مطابق

تیار کیا گیا ہے۔ یکساں قومی نصاب کو تین مراحل میں ڈیزائن کیا گیا ہے جسے

تعلیم کے تمام شعبوں میں لاگو کیا جائیگا۔ تعلیمی سال 2021-22 کے دوران 1 تا 5

گریڈ کے طلبہ کیلئے نیا نصاب متعارف کرایا جائیگا، دوسرے مرحلے میں گریڈ

(6-8) اور تیسرے میں (9-10) کیلئے نصاب کی تیاری شروع کردی ہے۔ یکساں

قومی نصاب قرآن و سنت، آئین، قومی پالیسیوں اور معیارات پر مرکوز ہوگا۔ پائیدار

ترقی کے اہداف، قائداعظمٌ اور علامہ اقبالٌ کے نظریات اور قومی اقدار پر بھی

توجہ مرکوز کی جائیگی۔ صدر مملکت نے وزارت وفاقی تعلیم و پیشہ ورانہ تربیت

کی کوششوں کو سراہتے ہوئے ایک جامع اور یکساں قومی نصاب تیار کرنے پر

وزارت کی پوری ٹیم کو مبارکباد پیش کی۔

Leave a Reply