یوٹیلیٹی سٹورز پر آٹا ، چینی اور اشیاء خورونوش ختم ،منافع خوری عروج پر پہنچ گئی

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہور(جنرل رپورٹر)لاک ڈائون کی وجہ سے شہر میں ذخیرہ اندوزی،منافع خوری عروج پر پہنچ

گئی،پرچون دکانداروں سمیت پان سگریٹ فروشوں نے تمام چیزوں کے ریٹ پر منافع خوری شروع

کر دی۔ شہر بھر میں کرونا وائرس کے باعث لاک ڈائون جاری ہے جس کی وجہ سے عام دکانداروں

نے گھی ،چینی،آٹا ،دالوں سمیت اشیائے خورونوش کی قیمتیں آسمان تک پہنچا دی ہیںجبکہ پان

سگریٹ کی دکانوں پر بھی سگریٹ سمیت پان کے ریٹ میں بھی اضافہ کر دیا گیا ہے ۔اندرون لاہور

میں سگریٹ کی قیمت ایک سو سے اڑھائی سو جبکہ پوش ایریاز میں ڈبی کی قیمت دو سو سے

ساڑھے تین سو تک وصول کی جا رہی ہے ۔دکاندار اپنے من مانے ریٹ پر اشیاء خورونوش فروخت

کر رہے ہیں جبکہ اس حوالے سے ابھی تک ضلعی انتظامیہ کی طرف سے کوئی ایکشن نہیں لیا گیا۔

دوسری جانب یوٹیلیٹی سٹورز پر آٹااورچینی سمیت اشیاء خورونوش نایاب ہوگئی ہیں ۔ لاک ڈاؤن میں

یوٹیلیٹی سٹور سے آٹا اور چینی نہ ملنے پر شہری پریشان ہیں۔ شہریوں نے کہا ہے کہ حکومت شہر

کے تمام یوٹیلیٹی اسٹورز پر آٹا اور چینی جلد فراہم کرئے، گھر کے راشن میں آٹا سب سے اہم چیز ہے

اگر یوٹیلیٹی اسٹورز پر سپلائی اسی طرح رہی تو آٹے کے بعد چینی اور دیگر اشیاء خورو نوش کا

بحران پیدا ہو سکتا ہے۔

Leave a Reply