corona Special jtnonline1

اومیکرون ،یورپی ممالک بوسٹر ڈوز کا دائرہ بڑھائیں،عالمی ادارہ صحت

Spread the love

یورپی ممالک بوسٹر ڈوز

ویانا،نئی دہلی،لندن،ڈیووس (جے ٹی این آن لائن نیوز)عالمی ادارہ صحت یورپ کے چیف نے

یورپی ممالک کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے اومیکرون کی صورت میں ایک اور طوفان یورپ کی

طرف بڑھ رہا ہے۔ڈبلیو ایچ او کے چیف نے تمام یورپی ممالک کو ہدایات جاری کی ہیں کہ وہ جلد از

جلد بوسٹر ڈوز کی ویکسی نیشن کے دائرہ کار کو وسیع کریں۔عالمی ادارہ صحت ڈبلیو ایچ او

یورپ کے چیف ہینس کلگ نے یورپی ممالک کو خبردار کیا ہے کہ کووڈ 19 کے اومیکرون

ویرئینٹ کے بڑہتے ہوئے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے کوششیں تیز کرنا ہونگی۔ڈبلیو ایچ او چیف ہینس

نے ویانا میں ایک پرہجوم پریس کانفرنس میں اومیکرون کے یورپ میں پھیلاؤ کے حوالے سے

صحافیوں کو بتایا۔ہینس کلگ نے کہا کہ اومیکرون کا طوفان برطانیہ ، ڈنمارک اور پرتگال کو بھی

شدید متاثر کر سکتا ہے۔ ہم ایک اور طوفان اپنی جانب بڑھتا دیکھ رہے ہیں، اور یہ خطرناک

طوفان اگلے چند ہفتوں میں خطے کے بیشتر ممالک میں تباہی پھیلا سکتا ہے۔دوسری جانب بھارت میں

اومیکرون کے کیسز میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے اور یہ تعداد 200 سے تجاوز کرگئی ہے۔بھارتی

میڈیا کے مطابق ملک کی مختلف ریاستوں میں کورونا وائرس کے نئے ویرینٹ ’اومیکرون‘ کے کیسز

میں تیزی سے اضافہ ہوتا جارہا ہے اور آئے دن نئی ریاستوں سے کیسز رپورٹ ہورہے ہیں۔بھارتی

وزارت صحت کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ اب تک بھارت کی 12

ریاستوں میں کورونا وائرس کے نئے ویرینٹ ’اومیکرون‘ کے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں اور یہ تعداد

سب سے زیادہ مہاراشٹرا سے سامنے آئی ہے۔ادھرامریکہ کے متعدی امراض کے صف اول کے ماہر

انتھونی فاوچی نے خبردار کیا ہے کہ اومی کرون ویر یئنٹ تیزی سے امریکہ اور دنیا بھر میں پھیلنے

کے باعث ملک کے اسپتالوں کے نظام پر دبا بڑھ رہا ہے۔دی فنانشنل ٹائمز نے اپنی رپورٹ میں

فاوچی کے “اے بی سی” کو دیئے گئے انٹرویو کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ ” اگر حالات ایسے ہی

رہے، جیسے وہ اب دیکھ رہے ہیں، تو ہمارے اسپتال اگلے ایک یا دو ہفتے میں مریضوں کے بہت

زیادہ دبا کا شکار ہوں گے”۔اومیکرون کے تیزی سے پھیلاؤ کے باعث سوئٹزر لینڈ میں ہونے والا

اجلاس ملتوی کر دیا گیا۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق سوئٹزرلینڈ کے شہر ڈیووس میں عالمی

رہنماؤں، دولت مندوں ، سرمایہ داروں اور صنعت کاروں کا سالانہ اجلاس جسے ’’ ورلڈ اکنامک

فورم‘ کہا جاتا ہے، اس سال کورونا کے نئے ویریئنٹ کے پھیلاؤ کی بنا پر ملتوی کر دیا گیا ہے۔ ورلڈ

اکنامک فورم کے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ” ڈیووس عالمی اقتصادی فورم ، سوئٹزرلینڈ میں ہونے

والا اپنا سالانہ اجلاس اومیکرون کے پھیلاؤ کے سلسلے میں جاری غیر یقینی صورتحال کے سبب

ملتوی کر رہا ہے۔عالمی اقتصادی فورم نے اس اجلاس کو موسم گرما میں منعقد کرنے کا اعلان کیا

ہے۔

یورپی ممالک بوسٹر ڈوز

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply