گولان پہاڑیوں سے متعلق ٹرمپ کا فیصلہ نقصان دہ،واشنگٹن پوسٹ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

واشنگٹن(جے ٹی این آن لائن)معروف امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نے لکھا ہے

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے گولان پہاڑیوں کو”اسرائیلی سرزمین”

کے طور پر تسلیم کرنا امریکی ڈپلومیسی کو نقصان پہنچائے گا۔ اخبار مزید لکھتا

ہے ٹرمپ کا یہ اقدام مشرقِ وسطی و دیگر علاقوں میں امریکی پالیسی کیلئے زہر

قاتل ثابت ہو سکتا ہے کیونکہ اس فیصلے کو اسرائیل کے ساتھ اچھائی کرنے کے

طور پرہی دیکھا جائے گا ۔ امریکہ کی علاقے میں پالیسیاں نصف صدی سے اقوام

متحدہ کی سلامتی کونسل کی 242 نمبر کی قرار داد کا حوالہ دینے والی تحریر

میں دعوی کیا گیا ہے “ٹرمپ کا اپنی مرضی کے مطابق گولان کے بارے میں

واشنگٹن کے موقف کو تبدیل کرنا مستقبل میں شام اور اسرائیل کے درمیان ہو

سکنے والے مذاکرات کے امکان کو نا ممکن بنا دے گا۔ اخبار مزید لکھتا ہے نتن

یاہو کی حکومت سمیت اسرائیلی حکومتیں ‘گولان پہاڑیوں کے معاملے میں دو

طرفہ امن معاہدے” کی مفاہمت پر کار بند رہتی تھیں۔ اب مستقبل میں ہونے والا

کوئی امن معاہدہ کس بنیاد پر طے پائے گا؟ ہم سمجھتے ہیں ٹرمپ اس سوال پر

غور نہیں کرسکے اور نہ ہی انہوں نے روس کے کریمیا کو اپنی سر زمین میں

شامل کرنے کی طرح کی کوششوں کی امریکی پالیسیوں کو مد نظر رکھا ہے۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply