کسانوں کیلئے حکومتی ریلیف، گندم کی امدادی قیمت 1350 روپے فی من مقرر

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اسلام آباد(جتن آن لائن کامرس رپورٹر) اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں گندم کی امدادی قیمت میں 50 روپے اضافے کی منظوری دے دی، اور اس کی امدادی قیمت 1350 روپے فی من مقرر کردی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : 46 کروڑ ڈالر جاری کرنے کیلئے آئی ایم ایف، پاکستان پالیسی مذاکرات شروع

تفصیلات کے مطابق مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ کی زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کا اجلاس منعقد ہوا۔ کمیٹی نے گندم کی امدادی قیمت میں 50 روپے من اضافے کی منظوری دے دی۔ اجلاس میں گندم کی امدادی قیمت 1350 روپے فی من مقرر کردی گئی-

قیمت میں اضافے سے کسانوں کی مشکلات دور ہوں گی۔ فیصلہ عالمی منڈی میں گندم کی قیمت کے تناظر میں کیا گیا، کمیٹی ارکان

کمیٹی ارکان کا کہنا تھا امدادی قیمت میں اضافے سے کسانوں کی مشکلات دور ہوں گی۔ فیصلہ عالمی منڈی میں گندم کی قیمت کے تناظر میں کیا گیا۔ ذرائع کے مطابق اجلاس میں ملک میں زرعی اجناس، گندم کے ذخائر اور قیمتوں کا جائزہ بھی لیا گیا۔ اجلاس میں کمیٹی ارکان کو روز مرہ کی اشیا کی قیمتوں سے متعلق بھی بریفنگ دی گئی۔ ذرائع کا کہنا ہے اجلاس میں مختلف شعبوں کی معاشی کارکردگی کا بھی جائزہ لیا گیا۔

قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس میں پنج سالہ منصوبے کی پبلک سیکٹر ڈیویلپمنٹ پروگرام میں زراعت کی ترقی، حکومت ایک قدم آگے

یاد رہے وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت رواں مالی سال کے بجٹ کی منظوری سے متعلق قومی اقتصادی کونسل اجلاس میں بارہویں پانچ سالہ منصوبہ 2018 سے 2023 کی اصولی منظوری بھی دی گئی تھی۔ جس کے مطابق آئندہ مالی سال کے پبلک سیکٹر ڈیویلپمنٹ پروگرام میں زراعت، آئی ٹی اعلی تعلیم سائنس و ٹیکنالوجی اور فنی تعلیمی پر زیادہ توجہ دینے کا فیصلہ کیا گیا- ملک کے کم ترقی یافتہ علاقوں کو ملک کے دیگر علاقوں کے برابر لانے کیلئے خصوصی منصوبے شروع کیے جائیں گے-

گندم امدادی قیمت مقرر

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply