گلوکار محسن عباس اور فاطمہ سہیل میں علیحدگی ہوگئی

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہور(کورٹ رپورٹر)گلوکار محسن عباس اور فاطمہ سہیل کے راستے

جدااورازواجی سفر اختتام پذیر ہوگیا،فیملی عدالت نے ماڈل فاطمہ سہیل کو خلع کی

ڈگری جاری کردی۔فیملی عدالت کے جج بابر ندیم نے فاطمہ سہیل نے مذکورہ بالا

حکم جاری کیاہے ۔گزشتہ روز ماڈل فاطمہ سہیل اور محسن عباس فیملی کورٹ

میں اپنے وکلاء کے ہمراہ پیش ہوئے، فاطمہ سہیل نے کہاکہ شوہر محسن عباس

نے تشدد کا نشانہ بنایا ،ان کا اپنے شوہر کے ساتھ گزرا ممکن نہیں ہے ،اسی لئے

وہ صلح نہیں کرسکتیں،بیٹے کی خود پرورش کروں گی،بیٹا مجھے جان سے

پیاراہے،محسن عباس نے کہا کہ فاطمہ سہیل پر کبھی بھی تشدد نہیں کیا ،ان کی

جانب سے لگائے گئے الزامات جھوٹے ہیں، محسن عباس نے عدالت میں بیان دیا

کہ وہ بھی فاطمہ سہیل کے ساتھ نہیں رہنا چاہتے ،عدالت خلع کی ڈگری جاری کر

دے انہیںکوئی اعتراض نہیں ،جس کے بعدعدالت نے بعد فاطمہ سہیل کے بیان کے

بعد خلع کی ڈگری جاری کردی۔عدالتی سماعت کے بعدمحسن عباس نے میڈیا سے

گفتگو کرتے ہوئے اپنے بچے کے بارے میں کہا کہ بچے کو ماں اور باپ دونوں

کے پیار کی ضرورت ہے لیکن وہ اس بارے میں قانونی راستہ اختیار کریں گے۔

Leave a Reply