Election 0

جماعتی بنیادوں پر بلدیاتی الیکشن، کے پی حکومت نے فیصلہ چیلنج کر دیا

Spread the love

پشاور(بیورو چیف، عمران رشید خان) کے پی حکومت فیصلہ

Journalist Imran Rasheed

صوبہ خیبر پختونخوا کی حکومت نے بلدیاتی انتخابات جماعتی بنیادوں پر کرانے

کا پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا۔ جب کہ چیئرمین

امن ترقی پارٹی محمد فائق شاہ نے کہا ہے خیبر پختونخوا میں الیکشن میں بری

طرح شکست کھانے کے خوف سے پی ٹی آئی کی صوبائی حکومت الیکشن کو

غیر جماعتی کرانے کی کوشش کر رہی ہے جس کو عوام کسی صورت کامیاب

نہیں ہونے دیں گے-

=-،-= خیبر پختونخوا سے مزید خبریں (=-= پڑھیں =-=)

تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا حکومت نے بلدیاتی الیکشن کا پہلا مرحلہ

غیر جماعتی بنیاد پر کرانے کا قانون بنایا تھا جسے سابق وزیراعلی اکرم درانی

و دیگر اراکان صوبائی اسمبلی نے پشاور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا تھا، پشاور

ہائی کورٹ نے غیر جماعتی بنیاد پر الیکشن کرانے کی شق کالعدم قرار دیتے

ہوئے الیکشن کمیشن کو جماعتی بنیاد پر الیکشن کرانے کا حکم دیا تھا۔ جس پر

صوبہ خیبر پختونخوا کی حکومت نے پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف

سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی۔ دائر کردہ درخواست میں موقف اختیار

کیا گیا ہے کہ پشاور ہائیکورٹ کے فیصلے سے قانون میں ابہام پیدا ہوا ہے، لہذا

سپریم کورٹ پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دے۔ صوبائی حکومت کی

درخواست پر جسٹس عمرعطا بندیال کی سربراہی میں تین رکنی بینچ دائر کردہ

درخواست کی سماعت 25 نومبر کو کرے گا۔

=-،-= کے پی حکومت بلدیاتی الیکشن سے فرار چاہتی ہے، فائق شاہ

چیئرمین امن ترقی پارٹی محمد فائق شاہ نے کہا ہے شکست کے خوف سے کے

پی کے حکومت بلدیاتی الیکشن کو غیر جماعتی کرانے کی کوشش کر رہی ہے

جس کو عوام کامیاب نہیں ہونے دیں گے، خیبر پختونخوا میں پی ٹی آئی کے 8

سالہ اقتدار میں ناقص کارکردگی کی وجہ سے صوبائی حکومت بلدیاتی الیکشن

سے فرار کے حیلے بہانے ڈھونڈ رہی ہے۔ حکمرانوں کو اپنی غیرمقبولیت کا

یقین ہے، اسلیے آئندہ الیکشن میں دھاندلی کے منصوبے ابھی سے تشکیل دیئے

جا رہے ہیں۔ عوام کے حقوق غصب کرنے والے آئندہ الیکشن میں منہ کی کھائیں

گے- موجودہ حکمرانوں نے عوام کو اس نہج تک پہنچا دیا کہ دو وقت کی روٹی

کے لئے در در کی ٹھوکریں کھانے پہ مجبور ہیں، کرپشن کیخلاف جنگ کرنے

کے دعویداروں نے مافیاز کو مضبوط کیا۔ پی ٹی آئی کے سوا تین سال میں نااہلی

کی داستانیں رقم ہوئیں۔ موجودہ حکومت سابقہ ادوار کا تسلسل ہے، جب کہ تبدیلی

کے دعوے جھوٹ اور فراڈ ثابت ہوئے۔ قوم آئندہ الیکشن میں حکمران ٹولے کا

محاسبہ کرے۔ جاگیرداروں اور وڈیروں کو عوامی طاقت سے خیرباد کہنا ہو گا۔

کے پی حکومت فیصلہ ، کے پی حکومت فیصلہ ، کے پی حکومت فیصلہ

کے پی حکومت فیصلہ ، کے پی حکومت فیصلہ

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply