new zara meri bhi suno1 135

کیا ملک، کیا ہی اس کے باسیوں کا خیال رکھنے والی حکومت

Spread the love

لکسمبرگ سٹی(جتن آن لائن مانیٹرنگ ڈیسک) کیا ملک

یورپی ملک لکسمبرگ نے اپنے شہریوں کو نئے سال کا تحفہ دینے کا انتظام کر لیا ہے۔ جلد ہی یہ ملک دنیا کا ایسا پہلا ملک بن جائے گا، جہاں ٹرینوں اور بسوں کا سفر مکمل طور ہر مفت ہو گا۔ یہ بھی پڑھیں

یورپ کا چھوٹا سا ملک ٹریفک نظام میں دنیا کیلیے ماڈل بننا چاہتا

میڈیارپورٹس کے مطابق یورپ کا چھوٹا سا ملک لکسمبرگ ٹریفک کے حوالے سے دنیا کے لیے ایک مثال قائم کرنا چاہتا ہے۔ یکم جنوری سے اس ملک کے چند حصوں میں بس اور ٹرین کا سفر مکمل طور پر فری کر دیا جائیگا لیکن نئے سال کے آغاز کے اکسٹھ دنوں کے اندر ملک بھر میں بسوں اور ٹرینوں کا سفر مفت میں ہو گا۔ یہ یورپی ملک یکم مارچ 2020ء تک دنیا کا ایسا پہلا ملک بن جائے گا، جہاں سفر کی سہولیات بالکل مفت فراہم کی جائیں گی۔

train

نظام سے سیاحت کو فروغ ملنے کا عندیہ

حکومت کی طرف سے جاری بیان کے مطابق ٹرین میں صرف فرسٹ کلاس کے مسافروں کو ٹکٹیں خریدنا ہوں گی۔ اسی طرح ٹکٹوں کر فروخت کرنے والے تمام مشینیں بند کر دی جائیں گی اور ٹکٹیں چیک کرنے والے عملے کو نئے فرائض سونپے جائیں گے۔ لکسمبرگ کے لبرل وزیراعظم کا کہنا تھا اس اقدام سے نہ صرف لکسمبرگ کی عالمی شہرت میں اضافہ ہو گا بلکہ سیاح بھی اس ملک کا رخ کریں گے۔

عوام کو ذاتی گاڑیوں کے استعمال سے روکنا

لکسمبرگ کی وزارت نقل و حمل کا کہنا تھا بس اور ٹرین میں سفر مفت ہونے کی وجہ سے تمام گاڑیوں والے تو ٹرینوں اور بسوں پر سفر شروع نہیں کریں گے لیکن اس کے باوجود یہ ان کی حکمت عملی کا ایک حصہ ہے کہ لوگوں کو گاڑیاں چھوڑنے پر مجبور کیا جائے اور مفت سفر کی سہولت فراہم کی جائے۔ علاوہ ازیں لکسمبرگ میں 2025 تک کاروں اور سائیکلوں کے لیے پارکنگ کے مقامات بھی
دوگنے کر دیے جائیں گے۔ لکسمبرگ میں روزانہ دو لاکھ 50 ہزار خالی سیٹوں کے ساتھ گاڑیاں چلائی جاتی ہیں۔ بہت سے ملازمین ایک کار میں تنہا سفر کرتے ہیں-

سائیکلوں کیلیے گیارہ سو کلومیٹر مزید نئے راستے بنانے کا منصوبہ

حکومت ایسے اکسٹھ فیصد تنہا سفر کرنے والے افراد کی تعداد سن دو ہزار پچیس تک کم کر کے چھیالیس فیصد تک لانا چاہتی ہے۔ اسی طرح سائیکلوں کے لیے گیارہ سو کلومیٹر تک مزید نئے راستے بنائے جائیں گے تاکہ لوگ سائیکلوں پر سفر کریں۔

کیا ملک

Leave a Reply