ڈیلٹا الفا بیٹا اقسام

کورونا،عیدپر پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا عندیہ، مزید 47 ہلاکتیں

Spread the love

کورونا مزید 47 ہلاکتیں

اسلام آباد، کراچی (جے ٹی این آن لائن نیوز) کورونا وائرس سے ملک بھر میں مزید 47 افراد جاں

بحق ہونے سے اموات کی تعداد 22 ہزار 689 ہوگئی، جبکہ گذشتہ 24گھنٹوں میں 2545نئے مریض

رپورٹ ہونے کے بعد پاکستان میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 9 لاکھ 81 ہزار 392

ہوگئی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق ملک بھر میں اب تک ایک

کروڑ 52 لاکھ 48 ہزار 785 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 48 ہزار 910

نئے ٹیسٹ کئے گئے، اب تک 9 لاکھ 16 ہزار 373 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ 2 ہزار 336

مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔وفاقی وزیر منصوبہ بندی اور سربراہ این سی او سی اسد عمر نے

کہا ہے بھارتی وائرس نے خطے کے ممالک میں تباہی مچا دی ہے، عوام سے اپیل ہے کورونا

ویکسین لگوائیں، انہوں نے کورونا کیسز اور متاثرہ مریضوں کے ہسپتالوں میں داخلے پر تشویش کا

اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ عوام انسداد کورونا ایس او پیز پرسختی سے عملدرآمد کریں تاکہ خود

اور اپنے پیاروں کو محفوظ رکھ سکیں ، ہسپتالوں میں کورونا مریضوں کی تعداد میں تیزی سے

اضافے کیساتھ ساتھ تشویشناک مریضوں کی تعداد بھی بڑھ رہی ہے، وائرس کا بھارتی ویرئنٹ پڑوسی

ممالک اور ریجن میں تباہی مچا چکا، لوگ اپنی اور دوسروں کی زندگیوں کو خطرے میں مت ڈالیں،

ایس او پیز پر عمل اور جلد ویکسین لگوائیں۔ادھر معاون خصوصی صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے عید

پر پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا کہ متاثرہ علاقوں میں زیادہ پابندیاں لگائی

جائیں گی، سیاحتی مقامات ویکسی نیشن والوں کو داخلے کی اجازت ہوگی، کشمیر کے جلسو ں میں

ماسک کا استعمال نہیں کیا جا رہا، ویکسین کی وافر مقدار ملک میں موجود، مزید بھی خرید رہے ہیں۔

ہمیں کورونا کیساتھ چلنا ہے جس کیلئے احتیاط ضروری ہے۔ پشاور میں عالمی وبا کورونا وائرس

پھیلنے کے خدشات پیدا ہونے کے پیش نظر سمارٹ لاک ڈاؤن لگانے کا نوٹیفیکیشن جاری کر دیا گیا

ہے۔نوٹیفیکیشن کے مطابق صوبائی دارالحکومت کے علاقوں میں گذشتہ رات نو بجے سے سمارٹ

لاک ڈاؤن نافذ کر دیا گیا۔ جن علاقوں میں سمارٹ لاک ڈاؤن نافذ کیا گیا ان میں اخوند آباد، ہزار خوانی

روڈ، افضل میڈیکل سنٹر روڈ ، ریگی للما اور اعجاز اباد کے علاقے شامل ہیں۔سمارٹ لاک ڈاؤن کے

دوران ان علاقوں سے آمدورفت بند رہے گی۔ضلعی انتظامیہ کا کہنا ہے ان علاقوں میں کورونا کے

کیسز رپور ٹ ہونے کی وجہ سے سمارٹ لاک ڈاؤن لگایا گیا، وزیر تعلیم خیبرپختونخوا شہرام ترکئی

نے کہا ہے صوبے میں کورونا کیسز بڑھے تو تعلیمی ادارے بند کرنا پڑیں گے، کوشش ہے کم وقت

میں نویں اور دسویں کے نتائج کا اعلان کریں۔ کورونا سے نمٹنے کیلئے اقداما ت ، بچوں کو سکولوں

میں رکھنے کی کوشش کررہے ہیں،اسلئے اوقات کار صبح 7تا 10 بجے تک کردیئے ہیں۔

کورونا مزید 47 ہلاکتیں

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply