Corona Viruse

کورونا سے مزید 64اموات ، 2670نئے مریض رپورٹ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز ) کورونا

پاکستان میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں کمی آنا حوصلہ افزا ء ہے تاہم

گزشتہ روز ملک بھر میں مصدقہ کیسز کی تعداد 2 لاکھ 48 ہزار 135 جبکہ اموات

5 ہزار 170 تک پہنچ گئی ۔سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ہفتہ کی سہ پہر تک

ملک بھر میں مجموعی طور پر 2670 نئے کیسز اور 64 اموات کا اضافہ دیکھا

گیا جبکہ 4 ہزار 42 افراد شفایاب ہوگئے۔خیال رہے کہ ملک میں کورونا وائرس

کے کیسز کی یومیہ تعداد میں گزشتہ ریکارڈ کے مقابلے میں کمی دیکھی گئی ہے

جس کی ایک وجہ ٹیسٹنگ کا کم ہونا بھی ہے۔تاہم صحتیاب افراد کی تعداد کی تعداد

میں تیزی سے اضافہ فعال مریضوں کیلئے امید کی کرن ہے کیونکہ ملک میں فعال

کیسز کی تعداد ایک لاکھ سے بھی کم رہ گئی ہے۔11 جولا ئی بروز ہفتہ کو ملک

میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد اور اموات رپورٹ ہوئیں۔سندھ میں کورونا

وائرس کے مزید ایک ہزار 452 نئے کیسز اور 34 اموات کا اضافہ سامنے آیا ۔ و

ز یراعلیٰ سندھ کے مطابق صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 10 ہزار 815 ٹیسٹ

کیے گئے جس میں ایک ہزار 452 میں وائرس کی تشخیص ہوئی۔اس طرح صوبے

میں مجموعی کیسز کی تعداد ایک لاکھ 3 ہزار 820 تک پہنچ گئی۔ساتھ ہی ان کا یہ

بھی کہنا تھا گزشتہ 24 گھنٹوں میں 34 افراد جان سے گئے اور مجموعی اموات

1747 تک پہنچ گئی۔پنجاب اس وقت امو ات کے حساب سے پہلے جبکہ کیسز میں

دوسرے نمبر پر سب سے زیادہ متاثر صوبہ ہے۔صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں

کے دوران 730 نئے مریضوں کی تشخیص ہوئی جس سے مجمو عی کیسز 85

ہزار 991 تک جاپہنچی۔اس کے علاوہ 13 افراد زندگی کی بازی ہار گئے اور یوں

کیسز کی مجموعی تعداد 1985 ہوگئی۔وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کورونا

وائرس کے 98 نئے مریض اور ایک موت کی تصدیق ہوئی۔سرکاری اعداد و شمار

کے مطابق ان نئے 98 کیسز کے بعد وہاں مجموعی طور پر کیسز کی تعداد 13

ہزار 927 ہوگئی۔مزید یہ کہ ایک فرد کی موت سے اب تک اسلام آباد میں وائرس

سے وفات پانے والوں کی تعداد 147 تک پہنچ گئی۔محکمہ صحت خیبر پختونخوا

نے کورونا کے 303 نئے کیسز کی تصدیق کی جس کے بعد یہاں متاثرین کی تعداد

30 ہزار 78 ہوگئی۔صوبے میں مزید 13 مریض دم توڑ گئے جس کے بعد خیبر

پختونخوا میں وائرس سے اموات کی تعداد 1087 ہوگئی ۔بلوچستان ہیلتھ ڈائر

یکٹوریٹ کے مطابق ہفتہ کو کورونا کے مزید 29 کیسز سامنے آئے جس کے بعد

صوبے میں متاثرہ افراد کی تعداد 11 ہزار 157 ہوگئی۔بلوچستان میں گزشتہ چوبیس

گھنٹے کے دوران وبا سے کوئی موت واقع نہیں ہوئی اور جاں بحق افراد کی تعداد

126 ہی ہے۔ملک میں دوسرے نمبرپر سب سے کم متاثر علاقے گلگت بلتستان میں

کورونا وائرس کے 11 مریض اور 2 اموات کا اضافہ ہوا۔سامنے آنیوالے اعداد و

شمار کے مطابق 11 نئے مریضوں کے بعد وہاں مصدقہ کیسز 1630 ہوگئے۔اس

کے علاوہ 2 افراد زندگی کی بازی ہار گئے اور یوں اموا ت 36 تک پہنچ گئی۔

ملک کا اب تک سب سے کم متاثر حصے آزاد کشمیر میں کیسز کی تعداد کچھ حد

تک بڑھتی نظر آرہی ہے اور وہاں مزید 17 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی

جبکہ ایک فرد لقمہ اجل بنا۔سرکاری اعداد و شمار کے مطابق 47 افراد کے سامنے

آنے کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد ایک ہزار 532 ہوگئی۔ اس کے علاوہ ایک

حکومت سے ہر قسم کا تعاون کرنے کو تیار ہیں، شوگر ملز ایسوسی ایشن

اور فرد کی موت نے وہاں اموات کی تعداد کو 42 تک پہنچا دیا۔ملک میں صحتیاب

افرا کی تعداد تیزی سے بڑھ رہی ہے جو دیگر مریضوں کیلئے حوصلہ افزا ہے۔

اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں 4 ہزار 42 مریض مکمل شفا یاب

ہوئے۔جس کے بعد ملک میں مجموعی طور پر اب تک صحتیاب ہونیوالوں کی

تعداد ایک لاکھ 53 ہزار 134 تک جاپہنچی۔ملک میں اس وائرس سے سب سے

زیادہ متاثرہ صوبہ سندھ اور پنجاب ہیں، صوبہ سندھ میں کیسز ایک لاکھ 3 ہزار

820 ہیں تو وہیں پنجاب میں 85 ہزار 991 تک کیسز پہنچ چکے ہیں۔صوبہ

خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس سے 30 ہزار 78 افراد متاثر ہوچکے ہیں جبکہ

صوبہ بلوچستان میں وبا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد 11 ہزار 157 ہے۔علاوہ

ازیں وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 13 ہزار 927، گلگت بلتستان میں 1630

اور آزاد کشمیر 1532 افراد عالمی وبا کا شکار ہوچکے ہیں۔دوسری طرف ملک

بھر میں کورونا وائرس کی ٹیسٹنگ میں 56 فیصد کمی واقع ہوئی ہے اور یومیہ

ٹیسٹنگ 43 ہزار 636 سے کم ہوکر 24 ہزار 496 پر آگئی۔وفاقی محکمہ صحت

کی رپورٹ کے مطابق پنجاب میں یومیہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت 16 ہزار 470 ہے

جو کم ہو کر 7 ہزار 745 پر آچکی ہے۔سندھ میں یومیہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت 13

ہزار 900 ہے جو کم ہوکر 10 ہزار669 ہوگئی ہے۔خیبرپختونخوا میں یومیہ

ٹیسٹنگ کی صلاحیت 2ہزار910 ہے لیکن وہاں بھی یومیہ ٹیسٹنگ کم ہوکر ایک

ہزار 829 پر آچکی ہے۔بلوچستان میں یومیہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت 2 ہزار200 سے

کم ہو کر صرف 243 ٹیسٹوں پر آچکی ہے۔وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں یومیہ

ٹیسٹنگ کی صلاحیت 7 ہزار 400 ہے جو اب 3ہزار 631 پر آچکی ہے۔محکمہ

صحت کے مطابق گلگت بلتستان میں یومیہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت 360 سے کم

ہوکر 53 پرآچکی ہے جبکہ آزاد جموں کشمیر میں یومیہ ٹیسٹنگ کی صلاحیت

376 سے کم ہوکر 326 پر آگئی ہے۔

کورونا

Leave a Reply