کوئی ملک کورونا ختم ہونے کادعویٰ نہیں کرسکتا ،عالمی ادارہ صحت

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

کورونا ختم کادعویٰ

نیویارک(جے ٹی این آن لائن نیوز)عالمی ادارہ صحت کے سربراہ نے کہا ہے کہ

دنیا کا کوئی بھی ملک یہ دعوی نہیں کر سکتا کہ کروناوائرس کی عالمی وبا ختم ہو

گئی ہے۔ ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے ٹیڈروس ایڈہینم نے کہا کہ دنیا کے

ممالک کو وائرس کے پھیلائو کو روکنے کے عمل کو بہت سنجیدگی سے لینا ہو

بچوں کیلئے میٹھا زہر، نوجوانوں کو اندر سے کھوکھلا کرنیوالے مشروبات

گا۔تمام ممالک کو معیشت کھولنے یا معمول کی زندگی بحال کرتے وقت وائرس کا

پھیلائوروکنے اور مزید ہلاکتوں سے بچنے کی حکمت عملی بھی مرتب کرنی

چاہیے۔ جن ممالک نے وائرس کو کنٹرول کر لیا ہے وہ اسی لحاظ سے اپنی

روزمرہ کے معمولات بحال کر سکتے ہیں۔ڈاکٹر ٹیڈروس نے وائرس کا پھیلا

روکنے کے لیے چار بنیادی نکات پر عمل درآمد پر زوردیتے ہوئے کہا کہ بڑے

اجتماعات جیسے اسٹیڈیمز اور نائٹ کلبز پر پابندی اور ٹیسٹنگ کا بہترین نظام،

ماسک کا استعمال اور سماجی فاصلوں سے وائرس کا پھیلا روکا جا سکتا ہے۔انہوں

نے یہ گفتگو امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن کے سربراہ ڈاکٹر سٹیفن ہان کے

ایک بیان کے ردعمل میں کی۔ ڈاکٹر ہان نے کہا تھا کہ ان کی ایجنسی ویکسین کے

ایمرجنسی استعمال کی اجازت دینے کی صلاحیت رکھتی ہے، اس سے پہلے کہ

بڑے پیمانے پر ویکسین تیار کی جائے۔عالمی ادارہ صحت کی چیف سائنس دان

ڈاکٹر سومیا سوامی ناتھ نے خبردار کیا کہ اس قسم کی اجازت دینے کے لیے بہت

زیادہ سنجیدگی اور غور و خوص درکار ہے۔ یہ قدم آسانی سے اٹھانے جانے والا

نہیں ہے۔

کورونا ختم کادعویٰ

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply