کوئٹہ ،بم دھماکہ میں2پولیس اہلکاروں سمیت 8 افراد جاں بحق،18زخمی ،اموات بڑھنے کا خدشہ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

کوئٹہ(مانیٹرنگ ڈیسک)کوئٹہ کے علاقے شارع اقبال پر دھماکے میں دو پولیس اہلکاروں سمیت 8

افراد جاں بحق اور 18 زخمی ہوگئے،دھماکے کے بعد سول سپتال میں ایمرجنسی نافذکردی

گئی،زخمیوں میں سے بعض کی حالت تشویشناک ہے،اموات بڑھنے کا بھی خدشہ ہے،ہسپتال انتظامیہ

۔پولیس حکام کے مطابق کوئٹہ کی اہم تجارتی شاہراہ میکانگی روڈ پر امن دشمنوں نے سڑک کنارے

کھڑی موٹر سائیکل کو اس وقت ریموٹ کنٹرول سے اڑا دیا جب فورسز کی گاڑی وہاں آ کر رکی۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان، اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف اور وزیراعلیٰ پنجاب سمیت اہم

رہنماؤں نے کوئٹہ دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور

افسوس کا اظہار کی ہے۔وزیراعظم عمران خان نے کوئٹہ دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے

دہشتگردی واقعے میں شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں اور شہریوں کے درجات کی بلندی کیلئے دعا

کی اور ہدایت جاری کی کہ زخمیوں کو بہترین طبی امداد کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔وزیراعلیٰ

پنجاب سردار عثمان بزدار نے بھی دھماکے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور

افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہدا کے لواحقین سے دلی ہمدردی ہے۔مولانا فضل الرحمن نے

شہیدوں کے بلند درجات کیلئے دعائے مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی اور کہا

کہ وہ لواحقین کے غم میں برابر کے شریک ہیں۔وزیر داخلہ اعجاز احمد شاہ نے اپنے بیان میں واقعے

کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ شرپسند عناصر کو ان کے ناپاک عزائم میں کامیاب نہیں ہونے دیں

گے۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے بھی دھماکے کی شدید

مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ انھیں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر دلی رنج اور افسوس ہے۔

دہشت گردی کے واقعات کو سنجیدگی سے لینا ہوگا۔ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کے حوالے سے

حکومت ذمہ داریوں کا تعین کرے۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply