کشمیر کی حیثیت کی بحالی تک بھارت سے تجارت نہیں ہو گی، وفاقی کابینہ کا فیصلہ

Spread the love

کشمیر کی حیثیت بحالی

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز) حکومت پاکستان نے کشمیر کی حیثیت کی بحالی تک بھارت سے

تجارت نہ کرنے کا فیصلہ کرلیا۔ وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے مطالبہ کیا کہ بھارت 5اگست

2019کیاقدامات واپس لے۔جمعرات کووزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس

ہوا، جس میں بھارت سے تجارت کی بحالی سے متعلق فیصلہ پر غور کیا گیا۔وفاقی کابینہ نے اقتصادی

رابطہ کمیٹی کی بھارت سے کپاس اور چینی درآمد کرنے کی تجویزمستردکردی ، گزشتہ روز ای سی

سی نے بھارت میں کم قیمت کی بنیاد پر کپاس اور چینی درآمد کی تجویز دی تھی۔ذرائع کا کہنا تھا کہ

بھارت سے درآمدکی مخالفت شیخ رشید، شیریں مزاری،شاہ محمود، اسدعمرنے کی اور کابینہ نے

فیصلہ کیا کشمیر کی حیثیت کی بحالی تک بھارت سے تجارت نہیں ہو گی۔وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید

نے کہاکہ بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کر رہا ہے، آرٹیکل 370کی منسوخی تک

بھارت سے تجارت نہیں ہو گی۔اس حوالے سے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بھارت

سے چینی اور کپاس کی درآمد کی سمری کو موخر کیا جائے، ان حالات میں بھارت کے ساتھ تجارت

ممکن نہیں، بھارت سے تعلقات نارمل ہونے کا تاثر دیا جا رہا ہے۔شاہ محمود قریشی نے مطالبہ کیا کہ

بھارت 5اگست 2019کے اقدامات واپس لے، 5اگست 2019کے اقدامات کی واپسی تک بھارت سے

تعلقات بحال نہیں ہوں گے۔

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply