کشمیر سمیت تمام امور پر پاک، بھارت براہ راست مکالمے کے حامی ہیں، امریکہ

کشمیر سمیت تمام امور پر پاک، بھارت براہ راست مکالمے کے حامی ہیں، امریکہ

Spread the love

واشنگٹن (جے ٹی این آن لائن انٹرنیشنل نیوز) کشمیر پاک بھارت امریکہ

امریکہ بدستور جموں اور کشمیر کے حالات کا قریبی جائزہ لے رہا ہے جس کے

بارے میں اس کے موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی۔ محکمہ خارجہ کے ترجمان

ہینڈ پرائس نے یہاں ایک پریس بریفنگ کے دوران کہا کہ امریکہ چاہتا ہے جموں

اور کشمیر میں جمہوری اقدار کے مطابق اقتصادی اور سیاسی معاملات کو معمول

پر لایا جائے۔ امریکہ اس سلسلے میں کئے جانے والے اقدامات کا خیر مقدم کرے

گا اور وزیر خارجہ بلنکن نے بھی اپنے بھارتی ہم منصب کیساتھ حالیہ رابطوں

میں دوسری باتوں کے علاوہ اس امور پر بھی امریکی موقف واضح کیا ہے۔

==-== یہ بھی پڑھیں : بھارت آج تک کشمیر پر بیانیہ پیش نہ کر سکا، جنرل ہوڈا

امریکہ کے پاکستان کیساتھ تعلقات بہت اہم ہیں اور بھارت کیساتھ بھی تعلقات ایسے

ہی ہیں، تاہم دونوں ممالک کیساتھ تعلقات اپنا اپنا الگ وجود رکھتے ہیں۔ امریکی

خارجہ پالیسی میں یہ دونوں ایک دوسرے پر اثر انداز نہیں ہوئے۔ ہمارے پاکستان

کیساتھ اگر تعمیری اور مفید تعلقات ہیں تو ہم بھارت کیساتھ بھی ایسے تعلقات

رکھیں گے تو اس سے اس پر کوئی فرق نہیں پڑنا چاہئے۔ ایسا نہیں ہے ایک ملک

کیساتھ تعلقات اچھے بنانے کے لئے دوسرے کیساتھ بگاڑے جائیں۔ بھارت کیساتھ

امریکہ کی عالمی جامع سٹرٹیجک شراکت داری ہے۔ جہاں تک پاکستان کا تعلق ہے

اس کے بارے میں پہلے بھی بتا چکے ہیں کہ اس کیساتھ ہمارے بہت سے مفادات

یکساں ہیں اور ہم پاکستانی حکام سے ان معاملات پر بدستور مل کر کام کر رہے

ہیں۔ محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے بتایا کہ امریکہ کشمیر سمیت تمام

امور پر پاکستان اور بھارت کے درمیان براہ راست مکالمے کا بدستور حامی ہے۔

امریکہ نے لائن آف کنٹرول پر کشیدگی کم کرنے اور2003ء میں ہونے والے سیز

فائر کے معاہدے پر ہمیشہ زور دیا ہے۔

=قارئین=: خبر اچھی لگے تو شیئر، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

کشمیر پاک بھارت امریکہ

Leave a Reply