corona virus

کرونا وباء، پاکستان میں اموات 11 ہو گئیں، متاثرین میں پنجاب سرفہرست آ گیا

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹرز، بیورورپورٹس) کرونا وباء پاکستان اموات

پاکستان میں کرونا وائرس کے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 137 کیسزجن میں سے خیبرپختونخوا میں 57، پنجاب میں 43، سندھ میں 19، گلگت بلتستان میں 16 اور اسلام آباد میں 2 کیسز سامنے آئے ہیں جس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 1327 تک جا پہنچی ہے۔ پنجاب میں ایک اور مریض کے جاں بحق ہونے سے ملک بھر میں ہلاکتوں کی تعداد 11 ہوگئی۔

مزید پڑھیں : کرونا نے ملک میں پنجے گاڑھ لیے، ہلاکتیں 9 ہو گئیں

تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب ملک بھر میں کرونا سے ہونےوالی اموات اور متاثرہ مریضوں کی تعداد کے باعث سرفہرست آگیا ہے- رپورٹس کے مطابق سندھ میں 440، پنجاب میں 492، خیبر پختونخوا میں 180، بلوچستان میں 133، گلگت بلتستان میں 103، اسلام آباد میں 27 اور آزاد کشمیر میں کرونا وائرس کے 2 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ ملک بھر میں اب تک وائرس سے متاثر 27 مریض صحت یاب ہوگئے ہیں، جن میں 14 کا تعلق سندھ، 6 گلگت بلتستان، اسلام آباد، خیبر پختونخوا اور بلوچستان میں 2، 2 جبکہ ایک کا پنجاب سے تعلق ہے۔ 7 کی حالت تشویشناک ہے۔

اسلام آباد

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کرونا کے مزید 5 کیسز سامنے آئے ہیں جو سرکاری پورٹل پر رپورٹ کیے گئے ہیں جس کے بعد اسلام آباد میں مجموعی کیسز کی تعداد 25 ہوگئی ہے۔کرونا وائرس کے خطرات کے باعث اسلام آباد میں شہزاد ٹاون اور رمشا کالونی میں ایک، ایک کرونا وائرس کا کیس سامنے آنے کے بعد دونوں علاقوں کو سیل کردیا گیا۔

صوبہ پنجاب

محکمہ صحت پنجاب کے مطابق کرونا وائرس سے لاہور میں ایک اور ہلاکت ہوئی ہے جس کے بعد صوبے میں اب تک 5 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ گزشتہ روز جاں بحق ہونیوالا 75 سالہ شخص لاہور کے علاقے ٹاون شپ کا رہائشی تھا اور اس کا سیمپل اس کے گھر میں ہی لیا گیا تھا۔ معمر شخص پہلے ہی متعدد بیماریوں کا شکار تھا۔ پنجاب میں 492 افراد میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے-

سرائے عالمگیر میں پورا خاندان کرونا کا شکار، گاؤں مکمل سیل

جنوبی پنجاب کے معروف علاقہ سرائے عالمگیر میں ایک ہی خاندان کے 6 افراد میں کرونا کی تصدیق ہوگئی، جس کے بعد پورے گاوں کو سیل کر دیا گیا۔ اسسٹنٹ کمشنر کا کہنا ہے کہ سپین سے آئے شہری میں کرونا وائرس ٹیسٹ مثبت آیا۔ پولیس اور پاک آرمی نے گاوں کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔

ڈی جی خان میں متاثرین کی تعداد سب سے زیادہ

ڈیرہ غازی خان کے قرنطینہ میں 207، ملتان کے قر نطینہ میں 19، لاہور میں 103، گجرات میں 22، گوجرانوالہ میں 8، جہلم میں 19، راولپنڈی میں 14، ملتان، فیصل آباد ، منڈی بہاﺅالدین میں3، 3، میانوالی میں 2 جبکہ نارووا ل ، رحیم یار خان، سرگودھا، اٹک اور بہاولنگر میں ایک، ایک شخص میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔
ننکانہ صاحب میں بھی کرونا وائرس کا ایک مریض سامنے آ یا ہے۔ ترجمان پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر کے مطابق چودہ روز کے دوران بیرون ملک سے آئے افراد آئسولیشن اختیار کریں، بیرون ملک سے آئے افراد میں آئسولیشن کے دوران علامات ظاہر ہوں تو 1033 پر رابطہ کریں۔

صوبہ سندھ

ترجمان محکمہ صحت سندھ کے مطابق صوبے میں کرونا وائرس کے کیسز کی مجموعی تعداد 440 ہوگئی ہے، کراچی میں مزید 7 نئے کیس رپورٹ ہوئے ہیں جس کے بعد صرف کراچی میں کیسز کی تعداد 153 ہوگئی ہے، حیدرآباد سے بھی ایک کیس رپورٹ ہوا ہے، اور ایک مریض دادو میں زیر علاج ہے۔ کراچی، حیدرآباد اور دادو کے مجموعی 156 میں سے 102 افراد میں وائرس مقامی طور پر منتقل ہوا۔ تفتان سے سکھر کے قرنطینہ مرکز منتقل کیے گئے زائرین میں سے 265 افراد میں کرونا کی تشخیص ہوچکی ہے۔

صوبہ بلوچستان

بلوچستان کے محکمہ صحت کے مطابق صوبے میں مزید 12 کیسز سامنے آئے ہیں جس کے بعد مصدقہ کیسز کی تعداد 131 ہوگئی ہے جبکہ سرکاری پورٹل پر بھی مجموعی کیسز کی یہی تعداد بتائی گئی ہے اور صوبائی حکومت کے ترجمان نے بھی صوبے میں 131 کیسز کی تصدیق کی ہے۔

صوبہ خیبر پختونخوا

خیبر پختونخوا میں 2 کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد صوبے میں مجموعی کیسز کی تعداد 123 ہوگئی ہے۔ خیبرپختونخوا کے محکمہ صحت کے مطابق 2 نئے کیسز اپر دیر سے سامنے آئے ہیں۔

گلگت بلتستان

گلگت بلتستان میں بھی 7 نئے کیسز مثبت آئے ہیں۔ مشیر اطلاعات گلگت بلتستان شمس میر نے بتایا کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی مجموعی تعداد 91 ہو گئی ہے۔ تمام نئے 7 مریضوں کا تعلق ضلع سکردو سے ہے۔

آزاد کشمیر

میرپور آزاد کشمیر میں ایک اور مریض میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد آزاد کشمیرمیں کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد 2 ہوگئی ہے۔ ڈپٹی کمشنرطاہر ممتاز کے مطابق 37 سالہ متاثرہ مریض 17 مارچ کو برطانیہ سے آیا تھا اور اسے دو روز قبل قر نطینہ میں منتقل کیا گیا تھا۔

کرونا وباء پاکستان اموات

Leave a Reply