Khabar aai hy

کرونا وائرس چین میں رپورٹ ہونے سے پہلے وجود میں آچکا تھا، سائنسدانوں کا انکشاف

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

کیلیفورنیا (جے ٹی این آن لائن خبر آئی ہے ) کرونا وائرس چین

سائنسدانوں نے انکشاف کیا ہے کہ کرونا وائرس چین میں رپورٹ ہونے سے

پہلے وجود میں آچکا تھا۔ رپورٹس کے مطابق سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ایسے

شواہد سامنے آئے ہیں جس سے معلوم ہوتا ہے کہ کرونا وائرس چین میں

رپورٹ ہونے سے پہلے وجود میں آچکا تھا۔ چین سے پہلے کئی مریضوں میں

کرونا کی علامات دیکھی جا چکی تھیں۔

کرونا سے بچاؤ کے ایس او پیز کی پاسداری کرنے پر انعامات کی بارش

———————————————————-
یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کے ماہرین نے انکشاف کیا کہ وائرس کی علامات

پچھلے سال کرسمس سے بھی پہلے سامنے آچکی تھیں۔ ریکارڈ سے یہ ثابت ہوا

ہے کہ پچھلے سال دسمبر میں ہی ایسے مریضوں کو ہسپتال میں لایا گیا جنہیں

کھانسی اور پھیپھڑوں کی بیماری لاحق تھی اور یہ سلسلہ فروری تک چلتا رہا۔

اس دوران پچھلے پانچ برسوں کے مقابلے میں ہسپتال کے نظام نے پچاس فیصد

زیادہ مریضوں کو ریکارڈ کیا اور اس وقت ڈاکٹروں نے کوویڈ نائنٹین کی نشاندہی

بھی کی تھی۔

امریکہ کرونا سے متاثر مما لک میں پہلے ، بھارت دوسرے نمبر پر

سائنسدانوں نے کہا کہ لاس اینجلس میں دسمبر 2019ء سے فروری 2020ء کے دوران ایک ہزار کرونا کے مریض ہوسکتے ہیں۔ خیال رہے اب تک عالمی وباء کرونا وائرس کے سبب دنیا میں 9 لاکھ 13 ہزار 988 افراد ہلاک اور دو کروڑ 83 لاکھ 33 ہزار 862 متاثر ہوچکے ہیں۔ دنیا میں کرونا وائرس کے ایکٹیو کیسز 70 لاکھ 72 ہزار 724 ہیں اور 2 کروڑ 3 لاکھ 47 ہزار 150 افراد صحت یاب ہو چکے ہیں۔ امریکہ کرونا وائرس سے متاثر ہونے والے ممالک میں پہلے اور بھارت دوسرے جبکہ برازیل تیسرے نمبر پر ہے۔

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

کرونا وائرس چین

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply