corona-virus

کرونا وائرس،فرانس مزید240،ایران میں 143افراد لقمہ اجل بن گئے،نیوزی لینڈ میں ایمرجنسی نافذ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

دنیا بھر سے( جے ٹی این آن لائن مانیٹرنگ ڈیسک)

دنیا بھر میں کرونا وائرس کے باعث ہلاکتوں کا سلسلہ جاری ہے، کرونا وائرس کے نتیجے میں اب تک چار لاکھ افراد بیمار ہوچکے ہیں، جبکہ دو ارب 60 کروڑ افراد کرونا کی وجہ سے شخصی تنہائی ( قرنطینہ ) میں ہیں۔

مزید پڑھیں :

تفصیلات کے مطابق اس وقت دنیا بھر میں کرونا کے مریضوں کی تعداد 4 لاکھ 1285 ہوگئی ہے۔ اس مہلک بیماری سے اب تک 18 ہزار 40 افراد موت سے ہم کنار ہوچکے ہیں۔ تقریبا دو ارب 60 کروڑ لوگ ایک دوسرے سے الگ تھلگ ہوگئے۔ کرونا وائرس کی وجہ سے کئی ممالک نے آبادی کیلئے لازمی تنہائی کا اعلان کر دیاہے-

برطانیہ، فرانس، اٹلی اور کولمبیا سمیت کئی دوسرے ممالک نے کرفیو نافذ کے سخت ترین اقدامات کیے۔ اس کے علاوہ یورپ میں کرونا وائرس کے دو لاکھ ہزار سے زیادہ کیسز کی تشخیص کی گئی ہے۔ ان میں سے نصف سے زیادہ اٹلی ہوئیں جہاں متاثرین کی تعداد 69 ہزار 927 ہوگئی ہے۔ اس کے بعد سپین میں 39 ہزار927 افراد بیمار ہوچکے ہیں۔
یورپی ممالک میں اب تک کرونا کے دو لاکھ 9 کیسز رجسٹرڈ کیے گئے ہیں، جبکہ یورپ میں مرنیوالوں کی تعداد 10 ہزار 732 ہوگئی ہے۔ جبکہ ایشیاء میں 98 ہزار 748 متاثرین اور اموات 3570 ریکارڈ کی گئی ہیں۔

نیوزی لینڈ میں کرونا وائرس کے 50 مزید کیسز کی تصدیق کے بعد ہنگامی حالت کا اعلان کردیا گیا۔ بدھ کے روز سول ڈیفنس ایمرجنسی مینجمنٹ سارہ سٹوارٹ بلیک نے کہا ہے، کہ ایمرجنسی حالت کا اعلان شہری دفاع کے وزیر پینی ہینارے نے سول ڈیفنس ایمرجنسی ایکٹ 2002ء کے تحت کیا ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ قومی ایمرجنسی کا نفاذ، وبائی مرض کی عالمگیر صورتحال کے پش نظر کیا گیا ہے-

کرونا وائرس کی وجہ سے فرانس میں مزید 240 افراد ہلاک ہوگئے ہیں، جس سے ہلاکتوں کی تعداد 1100 تک پہنچ گئی ہے۔ جیروم سلمان نے صحافیوں کو بتایا کہ 22300 افراد کا وائرس کا ٹیسٹ مثبت آیا ہے، جبکہ مجموعی طور پر 10176 افراد کو ہسپتالوں میں داخل کیا گیا ہے-

ایران کی وزارت صحت نے وبائی کرونا وائرس سے اموات میں اضافہ کی اطلاع دی ہے کیونکہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 143 افراد لقمہ اجل بنے ہیں۔ اس کے بعد ملک میں ہلاکتوں کی تعداد 2 ہزار 77 ہو گئی ہے۔

متحدہ عرب امارات نے کرونا وائرس کے 50 نئے کیسوں کی تصدیق کی ہے۔ان کے بعد ملک میں کرونا وائرس کے مریضوں تعداد بڑھ کر 248 ہوگئی ہے۔ مزید کئی عرب ممالک میں کرونا وائرس کے نئے کیسز سامنے آنے کی اطلاعات ہیں۔ خلیجی ریاستوں قطر اور کویت جب کہ مشرق وسطیٰ میں اردن اور افریقی ملک تیونس میں کرونا کے نئے کیسز سامنے آئے۔
قطر سپریم کمیٹی برائے کرائسس مینیجمنٹ کے حوالے سے ٹویٹر پرجاری خبر کے مطابق ملک میں کرونا وائرس کے 25 نئے کیسز کا اندراج کیا گیا ہے جس کے بعد کرونا کے متاثرہ افراد کی تعداد 526 ہوگئی ہے۔ وزیر صحت سعد جابر نے بتایا کہ گزشتہ روز کرونا وائرس کے 26 نئے کیسز ریکارڈ ہوئے۔

کویت کی وزارت صحت نے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس سے دو نئے کیسز کی تصدیق کی۔ گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کویت میں کرونا کے 9 مریض صحت یاب ہوئے ہیں جبکہ مجموعی کیسوں کی تعداد 39 ہے۔

تیونس کی وزارت صحت نے فیس بک پرکیمرون کی حکومت نے کرونا وائرس کی وجہ سے ملک میں پہلی ہلاکت کا اعلان کیا ہے اور کہا ہے کہ ہلاک ہونیوالا شخص اٹلی سے واپس آیا تھا اور پہنچتے ہی وائرس سے متاثر ہوا تھا ۔ وزیر صحت ملاشی منائوڈا نے ٹوئٹر پر کہا کہ بدقسمتی سے ہمارے ہاں کووڈ۔19 سے پہلی ہلاکت رپورٹ ہوئی ہے۔ وسطی افریقی ملک میں کرونا وائرس کیسز کی سرکاری تعداد 66 تک پہنچ گئی ہے-

امریکہ میں نئے کرونا وائرس سے 600 افراد ہلاک ہوگئے ہیں جبکہ تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 49768 ہے، اس اعلان میں جونز ہاپکنز یونیورسٹی کی جانب سے گزشتہ روز جاری کیے گئے اعداد و شمار برقرار رکھے ہیں۔ امریکہ، چین اور اٹلی کے بعد عالمی طورپر تصدیق شدہ کیسز رپورٹ کرنیوالا تیسرا بڑا ملک بن گیا ہے۔ رپورٹ شدہ کیسز کی بنیاد پر امریکہ میںہلاکتوں کی شرح اس وقت 1.2 فیصد ہے-
تاہم خیال کیا جارہا ہے کہ متاثر ہونیوالے افراد کی اصل تعداد بہت زیادہ ہو گی- جس کی وجہ سے شرح کم ہو سکتی ہے۔ امریکہ کے زیادہ تر علاقوں میں سماجی فاصلے اور قرنطینہ اقدامات اٹھائے گئے ہیں، جس کی وجہ سے دنیا کی سب سے بڑی معیشت اچانک رک گئی ہے۔

Leave a Reply