کراچی میں پراسرار وائرس 0

کراچی میں پراسرار وائرس پھیلنے کا انکشاف

Spread the love

کراچی میں پراسرار وائرس

کراچی (جے ٹی این آن لائن نیوز) صوبہ سندھ کے دارالحکومت کراچی میں مچھر کے کاٹنے سے

ہونے والے ’ڈینگی‘ بخار کی طرز کا ’پراسرار وائرس‘ پھیلنے کا انکشاف ہوا ہے۔ڈاؤ یونیورسٹی آف

ہیلتھ سائنسز سمیت کراچی کے مختلف ہسپتالوں کے طبی ماہرین اور پیتھالوجسٹز کے مطابق پھیلنے

والا ’پراسرار وائرس‘ بظاہر ’ڈینگی‘ کی طرح ہے مگر جب مریض کے ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں تو

ان میں ’ڈینگی‘ کی تشخیص نہیں ہو رہی۔کراچی کے مختلف ہسپتالوں کے پیتھالوجسٹز نے تصدیق کی

کہ انہوں نے متعدد ایسے مریض دیکھے ہیں، جن کی بیماری کی تمام علامات ’ڈینگی‘ جیسی ہیں مگر

جب ان کے ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں تو ان میں ’ڈینگی‘ کی تشخیص نہیں ہو رہی۔ڈاؤ یونیورسٹی ہسپتال

کے شعبے مالیکیولر پیتھالوجی کے سربراہ ڈاکٹر پروفیسر سعید خان نے تصدیق کی کہ ’پراسرار

وائرس‘ میں مبتلا ہونے والے افراد کے پلیٹلیٹس کم ہونے سمیت ان کے خون کے سفید ذرات بھی کم

ہو رہے ہیں، تاہم جب ان کا ٹیسٹ کیا جا رہا ہے تو ان میں ’ڈینگی‘ کی تشخیص نہیں ہو رہی۔بچوں

کے ڈاکٹر زوہیب نے بھی تصدیق کی کہ انہوں نے بھی

متعدد ایسے کیسز دیکھے ہیں، جن میں مریض کو دیکھ کر لگتا ہے کہ بظاہر انہیں ’ڈینگی‘ ہے مگر

جب ان کا ٹیسٹ کیا جا رہا ہے تو ان کی رپورٹ منفی آ رہی ہے۔سرکاری ہسپتال کے سینیئر ہیماٹو

پیتھالوجسٹ ڈاکٹر ذیشان حسین نے بھی ایسے ’پراسرار وائرس‘ کے پھیلنے کی تصدیق کی، تاہم ساتھ

ہی انہوں نے بتایا کہ خوش آئندہ بات یہ ہے کہ مذکورہ وائرس سے تاحال کوئی موت رپورٹ نہیں

ہوئی۔آغا خان ہسپتال کے ڈاکٹر فیصل محمود نے مذکورہ وائرس سے متعلق پوچھے گئے سوال پر بتایا

کہ انہوں نے شہر میں ’پراسرار وائرس‘ پھیلنے کی خبریں سنی ہیں، تاہم انہوں نے ذاتی طور پر اس

کا تاحال کوئی کیس نہیں دیکھا۔شہر کے سینیئر پیتھالوجسٹ ڈاکٹر ثاقب انصاری نے کراچی میں

’پراسرار وائرس‘ پھیلنے کے معاملے پر کہا کہ مذکورہ مسئلے پر کوئی بیان جاری کرنے سے قبل

اس کی مکمل تفتیش اور تصدیق کی جانی چاہیے۔

کراچی میں پراسرار وائرس

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply