ڈریپ کا 31 دوا ساز کمپنیوں کیخلاف ایکشن،143ادویات ضبط ،پروڈکشن بند

Spread the love

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے ملک بھر میں ادوایات کی

قیمتوں میں غیرقانونی اورخودساختہ اضافہ کرنے میں ملوث ادویہ ساز کمپنیوں

کیخلاف کارروائی شروع کر دی ۔ ترجمان ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کے مطابق

غیرقانونی طور پر قیمتیں بڑھانے والی 31 ادویہ ساز کمپنیوں کیخلاف کارروائی

کرنے سمیت ان کو ادویات کی تیاری سے بھی روک دیا گیا، ڈرگ ایکٹ کے

تحت ان کیخلاف مقدمات درج کیے جارہے ہیں۔ زیادہ قیمت پر فروخت کی جانے

والی 143 ادویات کو بھی ضبط کرلیاگیا ہے جبکہ ان ادویات کی پروڈکشن بھی بند

کر دی ہے۔ ترجمان وفاقی وزیر صحت کے مطابق عامر کیانی کی ہدایت پر ڈرگ

ریگولیٹری اتھارٹی نے غیر قانونی طور پر ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کرنیوالی

کمپنیوں کیخلاف سخت قانون کاروائی کی اور ایس آر او913 کے تحت بھاری

جرمانے وصول کرنے کے علاوہ ان سے ریکوری بھی کی جائے گی ۔وفاقی

وزیرعامر کیانی کا کہنا تھا قانون کی خلاف ورزی کرنیوالوں کیساتھ آہنی ہا تھوں

سے نمٹا جاے گا، عوام کو مناسب قیمت پر اور معیاری ادویات کی فراہمی کیلئے

حکومت اپنی ذمہ داری پوری کرے گی۔ ڈرگ ریگو لیٹری اتھارٹی نے صوبائی

دفاتر کو مرا سلہ ارسال کر دیا ہے کہ قانون شکنوں کیخلاف ہنگامی بنیادوں پر

کریک ڈائون کیا جائے۔ ڈریپ کے مطابق قانون شکنوں کیخلاف ڈرگ ایکٹ کے

تحت مقدمات کیے جا رہے ہیں ۔

Leave a Reply