ڈالر کا بوریا بستر ہمیشہ کیلئے گول، چین کے اقدام نے امریکہ کے ہوش ٹھکانے لگا دیئے

Spread the love

بیجنگ (جے ٹی این آن لائن خصوصی رپورٹ)

ڈالر کا ہمیشہ ہمیشہ کیلئے بوریا بستر گول کرنے کیلئے چین سمیت دیگر ہمنوا

کئی ممالک نے بڑی تعداد میں سونا ذخیرہ کرنا شروع کر دیا، چین کے اقدام نے

امریکہ کے ہوش اڑا دیئے، معاشی ماہرین کا کہنا ہے آنے والے وقت میں یہ

ممالک لین دین کیلئے ڈالر کی بجائے سونے کا استعمال کریں گے، جس کے بعد

ڈالر کا بوریا بستر گول ہونے کا خدشہ ہے اور عالمی تجارت میں ڈالر کی اجارہ

داری ختم ہو سکتی ہے۔ روسی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چین

یہ بھی پڑھیں: مصنوعی ذہانت میں چین، امریکہ سرفہرست

سمیت معاشی طور پر مضبوط کئی ممالک نے امریکہ کی بلیک میلنگ کو ناکام

بنانے کیلئے بڑے پیمانے پر سونے کی خریداری شروع کر دی ہے۔ امریکی

کرنسی ڈالر دنیا بھر کی تجارت کیلئے سب سے زیادہ استعمال ہونے والی کرنسی

ہے اور امریکا اسی بات کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے اپنے حریف ممالک کو

تجارتی نقصان پہنچانے کی کوشش کرتا رہتا ہے، حال ہی میں امریکہ نے چین کی

معیشت کو نقصان پہنچانے کیلئے تجارتی جنگ کا آغاز کیا اور چینی مصنوعات پر

ناجائز اور بھاری ٹیکس عائد کر دئیے جبکہ امریکہ چینی مصنوعات کو اپنے ملک

اور دنیا کے دوسرے ممالک میں پہنچنے سے روکنے کی بھرپور کوشش کر رہا

ہے۔ اسی باعث اب چین نے امریکہ کی اس بلیک میلنگ کو ناکام بنانے کا منصوبہ

تیار کر لیا ہے۔ چین نے دیگر کئی ممالک کے ساتھ مل کر خاموشی سے سونے کی

خریداری میں اضافہ کر دیا ہے۔ چین اور دنیا کے کئی ممالک تیزی سے اپنے

سونے کے ذخائر میں اضافہ کر رہے ہیں۔ روسی خبر رساں ادارے کی رپورٹ

کے مطابق چین اور دیگر ممالک جلد ہی بین الاقوامی تجارت کیلئے ڈالر کو خیرباد

کہہ کر سونے میں تجارت کا آغاز کر دیں گے۔ یوں اس اقدام کے باعث ڈالر کی

اجارہ داری ختم ہونا شروع ہو جائے گی۔ ماہرین معاشیات کا کہنا ہے کہ چین اور

دیگر ممالک عالمی تجارت کیلئے اگر ڈالر کی بجائے سونے کا استعمال شروع کر

دیتے ہیں تو ایسے میں دنیا کے دیگر ممالک بھی عالمی تجارت کیلئے ڈالر کی

بجائے سونے کا استعمال شروع کر دیں گے، یوں اس صورتحال میں امریکی ڈالر

کی طلب میں کمی ہوگی اور نتیجتاً اس کی قدر میں بھی کمی ہو جائے گی۔ اس تمام

یہ بھی پڑھیں: امریکہ کا ایرانی خام تیل کے خریدار ممالک پر پابندی لگانے کا اعلان

صورتحال نے امریکہ کو زبردست دھچکا دیا ہے جبکہ عالمی معاشی ماہرین کہتے

ہیں کہ اب امریکہ کیلئے چین کو دنیا کی نئی سپر پاور بننے سے روکنا بہت مشکل

ہو چکا ہے۔ جبکہ چین کی دیگر دنیا کے ممالک کیلئے پالیسیاں بھی مثبت ہیں جن

کی بدولت چین کو مستقبل قریب میں حقیقی معنوں میں عالمی سپر پاور کے طور

پر دنیا کو تسلیم کرنے میں کسی بھی قسم کی ہچکچاہٹ نہیں ہوگی-

Leave a Reply