چین میں ٹیراکوٹا جنگجوؤں کا مسکن عجائب گھر دوبارہ کھل گیا

چین میں ٹیراکوٹا جنگجوؤں کا مسکن عجائب گھر دوبارہ کھل گیا

Spread the love

شی آن، تھائی یوآن (جے ٹی این انٹرنیشنل نیوز) چین میں ٹیراکوٹا جنگجو

چین کے شمال مغربی صوبہ شانشی میں اپنے مشہور ٹیرا کوٹا جنگجوﺅں کی فوج

کے لیے معروف شہنشاہ چھن شی ہوانگ کا مقبرہ جمعہ کو دوبارہ کھل گیا ہے،

چین میں کرونا وائرس کے دوبارہ سر اٹھانے کے ایک ماہ سے زیادہ عرصہ تک

اس عجائب گھر میں سرگرمیاں معطل رہیں۔ عجائب گھر کے مطابق شہنشاہ چھن

شی ہوانگ کے مقبرہ کے مقام پر اس عجائب گھر کا دورہ کرنے کیلئے سیاحوں

کو آن لائن ریزرویشن کروانے کی ضرورت ہے، کیونکہ یہ عجائب گھر اسوقت

30 فیصد استعداد کے مطابق کام کر رہا ہے۔ یہ عجائب گھر سیاحتی گروہوں کو

قبول نہیں کرے گا اور درمیانے اور زیادہ خطرہ والے علاقوں کے سیاحوں کو

بھی اجازت نہیں ہے۔

=-= ایسی ہی مزید معلومات پر مبنی خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

چین کے کئی صوبوں میں مقامی طور پر منتقل ہونے والے نوول کرونا وائرس

کے کیسز سامنے آنے کے بعد ماہ جولائی کے آخر میں اس عجائب گھر کی

سرگرمیاں معطل کردی گئی تھیں۔ ٹیرا کوٹا جنگجوؤں کی فوج کے اس مقام کو

1974ء میں دریافت کیا گیا تھا، اسے پہلی بار چین کو متحد کرنے والے چِھن

خاندان (221 قبل مسیح سے 207 قبل مسیح کے درمیان) کے شہنشاہ چھن شی

ہوانگ نے بنایا تھا۔ صوبے میں شانشی کے تاریخی عجا ئب گھر سمیت دیگر

عجائب گھر حال ہی میں عوام کے لیے دوبارہ کھول دیئے گئے ہیں۔

=-،-= چین میں سیاحتی مقام میں تباہ کن آتشزدگی پر 38عہدیداروں کو سزا

چین کے شمالی صوبہ شنشی میں ایک سیاحتی مقام پر گزشتہ اکتوبر میں لگنے

والی آگ سے 13 افراد ہلاک اور 15 دیگر زخمی ہوئے، جس پر 38 عہدیداروں

کو سزا دی گئی ہے۔ حکام نے بتایا ہے کہ مقامی حکومت کے محکموں کے

عہدیداروں کو کام کے دوران تحفظ، فرائض سے غفلت اور نگرانی کی اہمیت کو

سمجھنے میں ناکامی پر پارٹی کے نظم و ضبط یا انتظامی سزائیں دی گئیں۔

صوبے کے دارالحکومت تھائی یوآن میں یکم اکتوبر 2020ء کو دوپہر تقریبا 1بج

کر 4 منٹ پر تائی تائی شان کے تفریحی مقام پر آتشزدگی کے اس واقعہ نے برف

کے مجسموں کے ایک نمائشی ہال کو اپنی لپیٹ میں لیا تھا۔ اس آگ نے 2 ہزار

258 مربع میٹرز کے رقبے کو جلا دیا تھا اور تقریبا ایک کروڑ 79 لاکھ یوآن

(27لاکھ 80 ہزار امریکی ڈالرز) کا براہ راست معاشی نقصان ہوا۔

=–= ایسی ہی مزید دلچسپ و عجیب خبریں =–= پڑھیں =–=

ایک تفتیش کے مطابق نمائش ہال میں بجلی کے کاریگروں کے غیر پیشہ ورانہ

کام کی وجہ سے آرائشی لائٹنگ میں شارٹ سرکٹ آگ لگنے کی براہ راست وجہ

تھی۔ تحقیقاتی ٹیم نے یہ بھی معلوم کیا کہ جس کمپنی نے اس مقام کا انتظام چلایا

اس نے محدود تعمیراتی علاقے میں زمین پر غیر قانونی طور پر قبضہ کر رکھا

ہے۔ اس نے لائسنس حاصل کیے بغیر تعمیر بھی شروع کر دی تھی اور بغیر

اجازت کے تفریحی مقام کو کھول دیا تھا۔ برف کے مجسموں کا یہ عجائب گھر

غیر پیشہ ورانہ طور پر ڈیزائن کیا گیا تھا اور اس کی تعمیر کے لیے بڑی مقدار

میں آتش گیر مادہ جیسے پولیوریتھین اور پولی سٹیرین استعمال کیا گیا تھا۔ محکمہ

عوامی تحفظ نے حادثے کی ذمہ دار کمپنی کے چھ ملازمین کو حراست میں لیا،

سات دیگر کو ان کی رہائش پر زیر نگرانی رکھا گیا اور انہیں عوامی استغاثہ کے

لیے انتظامی اداروں میں منتقل کر دیا۔

چین میں ٹیراکوٹا جنگجو ، چین میں ٹیراکوٹا جنگجو ، چین میں ٹیراکوٹا جنگجو

چین میں ٹیراکوٹا جنگجو ، چین میں ٹیراکوٹا جنگجو ، چین میں ٹیراکوٹا جنگجو

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply