khabar i hai jtnonline1

خطہ پرامن و خوشحال، افغانستان بنے گا سی پیک کا حصہ، چین،طالبان میں معاملات طے

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بیجنگ (جے ٹی این آن لائن خصوصی رپورٹ) چین طالبان معاملات طے

خطے کو پرامن، خوشحال اور ترقی یافتہ بنانے کیلئے چین اور افغان طالبان کے

مابین اہم معاملات طے پا گئے، پاکستان نے کلیدی کردار ادا کیا، طالبان افغانستان

میں پائیدار امن کا قیام یقینی بنائیں گے، چین افغانستان میں اربوں ڈالر سرمایہ

کاری کریگا، افغانستان کو سی پیک کا حصہ بناتے ہوئے وہاں انفرا سٹرکچر بنائے

گا، عالمی معیار کی سڑکوں کا جال اور جدید دفاعی ٹیکنالوجی سے افغانستان کو

آراستہ کیا جائیگا، عالمی معیار کے ائیر پورٹس، لڑاکا طیارے اور جدید دفاعی

نظام بھی دیا جائیگا-

یہ بھی پڑھیں : امریکہ، طالبان امن معاہدے کی سلامتی کونسل نے توثیق کر دی

افغان طالبان پاکستان کیلئے افغان سرحد کو محفوظ بنائیں گے، افغان سرزمین

سے پاکستان میں کسی قسم کی عسکری کارروائی کی اجازت نہیں دی جائیگی،

گوادر کو محفوظ بنانے کیلئے داعش، تحر یک طالبان پاکستان اور دیگر دہشتگرد

تنظیموں کیساتھ افغان طالبان نمٹیں گے، امکان ظاہر کیا گیا ہے کہ روس بھی جلد

اس ڈیل کا سٹیک ہولڈر بن جائیگا، امر یکہ، بھارت اور اسرائیل کی اس ڈیل پر

تشویش ایک فطری عمل ہے، تاہم امید ہے اس ڈیل کو سبوتاژ کرنے کی تمام

سازشیں ناکام بنا دی جائینگی-

مزید پڑھیں : افغان مسلے کا پر امن حل نہ نکلا تو آخری دم تک لڑیں گے.طالبان

یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ مستقبل قریب میں اسلام آبا د میں منعقد ہونیوالی عالمی کانفرنس میں افغان طالبان سٹیک ہولڈر کی حیثیت سے فرنٹ لائن کی نشستوں پر موجود ہونگے، تاہم اس سے پہلے طالبان کے وفود چین ،ترکی اور ایران کے دورے کریںگے۔ دوسری طرف فنانشل ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق چین نے افغان طالبان کو امن مذاکرات میں تعاون کے بدلے بڑی پیشکش کرتے ہوئے کہا طالبان امن مذاکرات کی کامیابی میں تعاون کریں تو چین ان کو بڑا معاشی پیکج دے گا، چین طالبان کیلئے روڈ نیٹ ورک تعمیر اور توانائی کے پراجیکٹس میں بھی بھاری سرمایہ کاری کرے گا۔

افغانستان میں امن لائیں بدلے میں سب کچھ ملے گا، چین کی پیشکش

فنانشل ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کے جنوب مغربی صوبہ بلوچستان کے قبائلی رہنماؤں نے بتایا چین کے سفارتکاروں نے بیجنگ میں گزشتہ تین ماہ سے جاری گفتگو کے دوران ملک میں توانائی اور بنیادی ڈھانچے کے منصوبوں میں قابل قدر سرمایہ کاری کی پیشکش کی ہے۔ چینی عہدیداروں نے طالبان کو پیشکش کی کہ وہ افغانستان میں امن لائیں تو بدلے میں چین ایسی موٹرویز بنائے گا جو افغانستان کے مختلف شہروں کو آپس میں جوڑے گی جس سے مقامی تجارت کو ترقی ملے گی۔ رپورٹ کے مطابق چین اپنی سرحد سے جڑے ممالک میں دلچسپی لے رہا ہے، افغانستان چین کے مجموعی مفاد میں بھی فٹ ہے۔

زلمے خلیل زاد نے طالبان مذاکراتکاروں کی نئی ٹیم کے سربراہ کیساتھ ملاقات
———————————————————————————————-

دوسری جانب افغان مفاہمتی عمل کیلئے امریکی نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے طالبان مذاکراتکاروں کی نئی ٹیم کے سربرا ہ کیساتھ دوحہ میں ملاقات کی امریکی حکام کیساتھ گزشتہ دو سالوں سے مذاکرات کی قیادت طالبان کی جانب سے ملا برادر نے کی تھی، تاہم گزشتہ ہفتے طالبان کے اعلی رہنما حبیب اللہ آخونزادہ نے اعلان کیا تھا طالبان کے شریک بانی ملا برادر کے بجائے عبدالحکیم حقانی کی سربراہی میں 21 رکنی ایک نئی ٹیم تشکیل دی جائےگی۔

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

چین طالبان معاملات طے

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply