بجلی مہنگی

پٹرول مہنگا،بجلی بھی مہنگی ، ایل پی جی کی قیمت میں 29روپے کلو اضافہ

Spread the love

پٹرول مہنگا بجلی مہنگی

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز) وفاقی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے

کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے جس کے مطابق پٹرول چار روپے ،ہائی اسپیڈ ڈیزل دو روپے ، مٹی کا

تیل سات روپے پانچ پیسے اور لائٹ ڈیزل 8روپے 82پیسے مہنگا ہوگیا ۔ فنانس ڈویژن کی جانب سے

جاری نوٹیفکیشن کے مطابق پٹرول کی قیمت میں 4روپے فی لیٹر اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد

پٹرول کی نئی قیمت 127روپے 30پیسے ہوگئی ،اس سے پہلے پٹرول123روپے 30پیسے فی لیٹر

دستیاب تھا ۔نوٹیفکیشن کے مطابق ہائی سپیڈڈیزل کی قیمت میں دو روپے فی لیٹر اضافہ کیا گیا جس

کے بعد اب 122روپے چار پیسے فی لیٹر ملے گا، اس سے پہلے ہائی سپیڈ ڈیزل 120روپے چار

پیسے فی لیٹر دستیاب تھا ، اسی طرح مٹی کے تیل میں سات روپے پانچ پیسے فی لیٹر اضافہ کر

دیا گیا جس کے بعد مٹی کی نئی قیمت 99روپے 31پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے۔ نوٹیفکیشن کے مطابق

لائٹ ڈیزل کی قیمت میں بھی 8روپے 82پیسے اضافہ کیا گیا ،اس سے پہلے لائٹ ڈیزل 90روپے

69پیسے فی لیٹر دستیاب تھا اب لائٹ ڈیزل 99روپے 51پیسے میں ملے گا ۔وزارت خزانہ کے مطابق

نئی قیمتوں کا اطلاق اکتوبر کے پہلے پندرہ روز کیلئے ہوگا ۔دوسری طرف ایل پی جی کی آسمانوں

سے باتیں کرتی قیمت کا نیا ریکاڈ قائم کرلیا گیا۔اوگرا نوٹیفکیشن کے مطابق۔ماہ اکتوبر2021کے لیے

ایل پی جی کی قیمت میں 29روپے فی کلو، گھریلو سلنڈر 344روپے اور کمرشل سلنڈر کی قیمت

میں 1322روپے کااضافہ کر دیاگیا۔اب ایل پی جی175روپے فی کلو سے بڑھ کر 204روپے فی کلو،

گھریلو سلنڈر2060سے بڑھ کر 2404اور کمرشل سلنڈر 7926روپے سے بڑھ کر9248 روپے ہوگیا۔

پہاڑی علاقوں میں ایل پی جی کی قیمت 225روپے فی کلو،گھریلو سلنڈر 2655روپے اور کمر شل

سلنڈر 10215روپے پر پہنچ گئی۔ گلگت بلتستان میں ایل پی جی کی قیمت 250روپے فی کلو،گھریلو

سلنڈر2950روپے اور کمر شل سلنڈر 11350روپے پر پہنچ گئی۔پاکستان کے پہاڑی و دیگر علاقوں

میں قدرتی گیس میسر نہ ہونے کے باعث لوگ ایل پی جی پر انحصار کرتے ہیں جو کہ اب ان کی پہنچ

سے دور کر دی گئی ہے۔ دریں اثنابجلی کی قیمت 1 روپیہ 95 پیسے فی یونٹ اضافے کا امکان ہے

جس کے باعث منظوری کی صورت میں صارفین پر 25 ارب روپے کا بوجھ پڑیگا۔ گزشتہ روز نیپرا

میں بجلی ایک ماہ کیلئے بجلی 2 روپیہ 7 پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے کی درخواست پر سماعت کی

گئی۔ نیپرا نے سینٹرل پاور پرچیزنگ ایجنسی کی درخوا ست پر سماعت کی اور فیصلہ محفوظ کرلیا

اور بجلی مہنگی کرنے سے متعلق اپنا فیصلہ بعد میں جاری کریگا۔سی پی پی اے کی جانب سے

درخواست اگست کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی مد میں دی گئی، جس میں مؤقف پیش کیا گیا کہ ڈیزل

اور فرنس آئل سے مہنگی ترین پیداوار بجلی مہنگی ہونے کی وجہ ہے، گزشتہ ماہ ڈیزل سے 22

روپے 62 پیسے فی یونٹ بجلی پیدا کی گئی، فرنس آئل سے 18 روپے 24 پیسے فی یونٹ بجلی پیدا

کی گئی۔ سی پی پی اے نے بجلی ایک ماہ کیلئے 2 روپے 7 پیسے فی یونٹ اضافے کی درخواست کی

تھی، تاہم نیپرا کی جانب سے بجلی ایک روپیہ 95 پیسے فی یونٹ اضافے کا امکان ہے، منظوری کی

صورت میں صارفین پر 25 ارب روپے کا بوجھ پڑے گا۔

پٹرول مہنگا بجلی مہنگی

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply