0

پنجاب پولیس میں فوری اصلاحات کا فیصلہ

Spread the love

وزیراعظم کی زیرصدارت اعلیٰ سطح اجلاس میں پنجاب پولیس میں اصلاحات لانے کا فیصلہ کیا گیا۔وزیراعظم کی زیرصدارت اعلیٰ سطح اجلاس ہوا جس میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے بھی شرکت کی، اجلاس کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیراطلاعات فوادچوہدری کا کہنا تھا کہ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ خیبرپختونخواکی طرز پر پنجاب میں پولیس ایکٹ لایا جائے گا، یہ تجربہ پہلے کے پی میں بھی کامیاب رہا ہے، پہلے مرحلے میں پنجاب کے 100پولیس سٹیشنزکوماڈل پولیس اسٹیشنزبنایا جائے گا جب کہ پولیس کلچرتبدیل کرنے کے لیے افسران و اہلکاروں کی جدید خطوط پرتربیت کی جائے گی۔وزیراطلاعات کا کہنا تھا کہ پاکستان کو پہلی باردنیا کے لیے اوپن کر رہے ہیں، اور ویزا سے متعلق بڑی تبدیلی لائی جا رہی ہے، ویزا رجیم سے صحافیوں اور تاجروں کو بہت فائدہ ہوگا، جب کہ بیرون ملک پاکستانی بھی اس سے استفادہ کرسکیں گے۔دریں اثناوزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس اسلام آباد میں ہوا جس میں ملک کی معاشی صورتحال سمیت مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اجلاس میں 15 جنوری 2019 کے اقتصادی رابطہ کمیٹی میں ہونے والے فیصلوں کی توثیق کی گئی۔اس کے علاوہ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں سانحہ ساہیوال کا بھی تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ذرائع کا بتانا ہے کہ وزیراعظم نے سانحہ ساہیوال کے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دینے کے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ عوام کے جان و مال کا تحفظ حکومت کا بنیادی فرض ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ حکومت سانحہ ساہیوال جیسے واقعات کو ہرگز برداشت نہیں کرے گی۔ذرائع کا بتانا ہے کہ وفاقی کابینہ نے پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن میں لازمی سروس ایکٹ 1952 کے نفاذ کی منظوری دیدی۔کابینہ نے سیکیورٹی پیپرز لمیٹیڈ کراچی پر لازمی سروس ایکٹ 1952 کے نفاذ کی بھی منظوری دی۔اس کے علاوہ وفاقی کابینہ نے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین ایرا کی تعیناتی کی بھی منظوری دی۔اجلاس میں پی آئی اے میں لازمی سروس ایکٹ 1952 کے نفاذ کی منظوری کے علاوہ غیر ملکیوں کے لیے ڈالر سرٹیفکیٹس خریدنے کی منظوری بھی دی گئی۔وفاقی کابینہ نے بلوچستان اور لاہور کی پیمرا کونسل آف کمپلینٹس کی تشکیل نو کی منظوری دی۔کابینہ میں فیڈرل لینڈ کمیشن میں سینئر ممبر لینڈ کی تعیناتی کی منظوری بھی دی گئی۔ دوسری طرفحکومت پاکستان نے 97 ممالک کے لیے ویزا شرائط نرم کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے، یہ فیصلہ وزیرِ اعظم عمران خان کی زیرِ صدارت اجلاس میں کیا گیا۔تفصیلات کے مطابق وزیرِ اعظم کی زیرِ صدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ پہلے مرحلے میں 97 ممالک کے لیے ویزا کی شرائط نرم کی جائیں گی۔دنیا کی پاکستان تک رسائی آسان بنائیں گے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیرِ اعظم عمران خان نے ویزا پالیسی میں نرمی کے لیے مختلف کیٹگریز بنانے کی ہدایت کر دی ہے۔ذرائع مطابق ویزا آن ارائیول اور ویزا اجرا کے لیے مدت میں کمی کی کیٹگریز بنائی جائیں گی، وزیرِ اعظم کی جانب سے وزارتِ خارجہ، داخلہ کو فوری کام مکمل کرنے کی ہدایت جاری کردی گئی ہے۔وزیرِ اعظم نے ویزا اصلاحات کو آسان بنانے کے لیے بھی مربوط انداز میں کام کرنے کی ہدایت کی ہے۔ذرائع کے مطابق وزیرِ اعظم عمران خان نے اجلاس میں کہا کہ دنیا کی پاکستان تک رسائی آسان بنائیں گے، سیاحوں، سرمایہ کاروں کے لیے پاکستان کو پر کشش بنانا ہے، دنیا بھر کے تاجروں، سیاحوں کے لیے ویزے میں آسانی پیدا کی جائے گی۔یاد رہے کہ 13 جنوری 2019 کو وفاقی وزیرِ اطلاعات نے کہا تھا کہ حکومت ملک میں سیاحت کے فروغ کے لیے 66 ممالک کے لیے پاکستان کا ویزا ختم کر رہی ہے، تاکہ ان ممالک سے لوگ آئیں اور پاکستان میں منعقد ہونے والے فیسٹیولز کو انجوائے کریں۔

Leave a Reply