پشاور ہائیکورٹ کے جسٹس محمد ایوب پر قاتلانہ حملہ، ڈرائیور سمیت شدیدزخمی

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

پشاور کے علاقے حیات آباد میں نامعلوم افراد کی فائرنگ کے نتیجے میں پشاور ہائیکورٹ کے جج جسٹس محمد ایوب اور ان کا ڈرائیور زخمی ہوگیا۔ایس پی کینٹ وسیم ریاض کے مطابق حیات آباد فیز 5 میں نامعلوم افراد نے پشاور ہائیکورٹ کے جسٹس محمد ایوب کی گاڑی کو روک کر چاروں طرف سے فائرنگ کی۔پولیس حکام کے مطابق جسٹس ایوب خان مروت کو 2 گولیاں لگیں، ڈرائیوربھی زخمی ہوا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ جسٹس محمد ایوب کی گاڑی پر پستول اور کلاشنکوف سے فائرنگ کی گئی جس میں پشاور ہائیکورٹ کے جج اور ان کا ڈرائیور زخمی ہوا جنہیں حیات آباد میڈیکل کمپلکس منتقل کیا گیا ہے۔ حیات آباد میڈیکل کمپلیکس انتظامیہ کے مطابق ڈرائیور کو طبی امداد دی جا رہی ہے۔چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ جسٹس وقار احمد سیٹھ نے جسٹس محمد ایوب کی عیادت کی جس کے بعد ان کا کہنا تھا کہ جسٹس محمد ایوب کے بازو پر ایک گولی لگی تاہم ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ نے کہا کہ پولیس کو حملہ آوروں کی جلد گرفتاری کا کہا ہے، جلد تفتیش کر کے آگاہ کیا جائے۔دوسری جانب پشاور ہائیکورٹ کے جج پر فائرنگ کے واقعے کے خلاف خیبر پختونخوا بار کونسل نے ہڑتال کی کال دے دی۔وائس چیئرمین خیبر پختونخوا بار کونسل نے کہا کہ وکلا آج عدالتی کارروائی میں حصہ نہیں لیں گے، ملزمان کو جلد از جلد گرفتار کیا جائے۔بلوچستان بار کونسل نے پشاور ہائیکورٹ کے جج پر فائرنگ کے خلاف صوبے بھر میں عدالتی کارروائی کے بائیکاٹ کی کال دی ہے۔دریں اثناء پاکستان بار کونسل نے پشاور ہائیکورٹ کے جج پر فائرنگ کے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے ذمہ داران کے خلاف جلد از جلد کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔وفاق سمیت صوبائی حکومتیںججز کی فول پروف سیکورٹی کی دستیابی پر فوری اقدامات اٹھائیں۔مزید برآں گورنرخیبرپختونخوا شاہ فرمان حیات آباد پشاور میں نامعلوم افرادکی فائرنگ سے زخمی ہونیوالے پشاورہائی کورٹ کے جج جسٹس محمد ایوب کی عیادت کیلئے نارتھ ویسٹ جنرل ہسپتال گئے اور ان کی خیریت دریافت کی۔ گورنر نے اس موقع پر جسٹس محمدایوب پر فائرنگ کے واقعے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہاکہ واقعے میں ملوث عناصر کو بہت جلدکیفرکردار تک پہنچادیاجائیگا۔ گورنرشاہ فرمان نے جسٹس محمدایوب اوران کے ڈرائیور کیلئے جلد ازجلد صحت یابی کیلئے نیک خواہشات کا اظہارکیا۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply