پشاور میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیاں، 65 ہزار 314 افراد کا چالان 0

پشاور, ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیوں پر چالان و تقسیمِ انعامات

Spread the love

پشاور(بیورو چیف، عمران رشید خان) پشاور میں ٹریفک قوانین

Journalist Imran Rasheed

سٹی ٹریفک پولیس پشاور نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیوں پر گزشتہ ماہ 65

ہزار 314 افراد کا چالان کر کے 1 کروڑ 44 لاکھ 79 ہزار روپے جرمانوں کی

مد میں وصول کر کے قومی خزانے میں جمع کر دیئے- سٹی ٹریفک پولیس

پشاور کی ایجوکیشن ٹیمیں شہر کے مختلف سیکٹرز میں چیف ٹریفک آفیسر

عباس مجید خان مروت کی ہدایت پر پہلے شہریوں کو ٹریفک قوانین سے متعلق

آگاہی دیتی ہیں، جس کے بعد باقاعدہ ٹریفک قوانین پر عمل درآمد نہ کرنے والوں

کے خلاف کارروائیاں کی جاتی ہیں-

=-،-= خیبر پختونخوا سے مزید خبریں (=-= پڑھیں =-=)

تفصیلات کے مطابق اس سلسلے میں شہر کے مختلف سیکٹرز میں سٹی ٹریفک

پولیس پشاور کے اہلکاروں کی جانب سے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیوں پر

گزشتہ ایک ماہ میں 65 ہزار 314 افراد کا چالان کیا گیا، جن سے جرمانوں کی

مد میں 1 کروڑ 44 لاکھ 79 ہزار روپے حاصل کر کے سرکاری خزانہ میں جمع

کئے گئے۔ چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے کارروائیوں پر اطمینان

کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور ٹریفک قوانین پر عملدرآمد

یقینی بنانے کیلئے تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائے گی۔ انہوں نے کہا ٹریفک

حکام ٹریفک قوانین پر عمل درآمد یقینی بنائیں، اس سلسلے میں کسی قسم کی

کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی، جبکہ ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کے

مرتکب افراد کیخلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ انہوں نے مزید

کہا کہ تمام افسران اور اہلکار پوری جانفشانی کے ساتھ ٹریفک کی روانی اور

شہریوں میں روڈ سیفٹی کے حوالے سے بھی آگاہی اور شعور اجاگر کرنے کے

لئے اپنا بھر پور کردار ادا کریں۔

=-،-= شہر میں ٹریفک قوانین کی ایجوکیشن مہم جاری

ترجمان شہاب خان سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے مطابق سٹی ٹریفک پولیس

پشاور کی ایجوکیشن آگاہی مہم تین ماہ سے جاری و ساری ہے۔ جس میں 3 ٹیموں

کو تشکیل دیا گیا ہے، جو کہ مختلف چوکوں، چوراہوں اور یونیورسٹیز، کالجز

سکولز کے طلبہ کو ٹریفک کے حوالے آگاہی دیتے ہے۔ ایس ایس پی ٹریفک

عباس مجید مروت کی سرپرستی میں انچارج ایجوکیشن پروگرام آصف رضا اور

خاتون ڈی ایس پی انیلا ناز نے خیبر روڈ پر آگاہی مہم کے دوران ” جتن ” جرنل

ٹیلی نیٹ ورک (جے ٹی این آن لائن ) سے بات چیت کرتے ہوئے کہنا تھا کہ کم

عمر بچوں کو والدین اس وقت تک ڈرائیونگ کی اجازت ہرگز نہ دیں۔ جب تک

ان کا ڈرائیونگ لائسنس اور شناختی کارڈ نہ بن جائے- ان کا مزید کہنا تھا روڑ

پر موجور گاڑیوں میں بیھٹے ڈرائیور حضرات کو سیٹ بیلٹ کا استعمال اور اس

کے بارے میں آگاہی دی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا موٹرسائیکل سوار ہیلمٹ کا

استعمال لازمی کریں۔ جو موٹرسائیکل سوار ہیلمٹ استعمال نہیں کرتے وہ افراد

حادثات کا شکار ہو جانے کی صورت میں خود کو جان بوجھ کر زیادہ نقصان

پہنچنے سے دوچار کرنے سمیت موت کو بھی از خود دعوت دیتے ہیں۔

=-،-= ون وہیلنگ سراسر موت کو دعوت، انیلا ناز

پشاور میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیاں، 65 ہزار 314 افراد کا چالان

ڈی ایس پی انیلا ناز کا کہنا تھا اکثر اوقات موٹر سائیکل، بڑی چھوٹی گاڑیوں کے

ڈرائیور ڈرائیونگ کے دوران موبائل فون کا استعمال کرتے ہے، جو کہ خطرناک

حادثات کا سبب بنتے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا ون ویلنگ ایک لعنت ہے۔ اس

سے والدین اپنے بچوں کو بچائیں۔ ون ویلنگ میں روزانہ کی بنیاد پر کم عمر

بچوں کو جرمانے کے ساتھ ساتھ ان کی موٹرسائیکل بھی ضبط کرنے کا عمل

شروع کر دیا گیا ہے۔ جس کے تحت کم عمر موٹرسائیکل سوار بچے سے موٹر

سائیکل پکڑ کر بعد پشاور ٹرمینل میں بند کردیا جاتا ہے جبکہ بچے کے والدین

سے بیان حلفی کا اسٹامپ پیپر لیا جاتا ہے جس میں والدین سے حلفیہ ضمانت لی

جاتی ہے کہ آئندہ وہ اپنےکم عمر بچوں کو موٹرسائکل چلانے کیلئے نہیں دیں

گے بصورت دیگر قید و جرمانے کی سزا بھگتیں گے۔

ٹریفک پولیس ہیڈکوارٹر گلبہار میں تقریب تقسیم انعامات

سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے زیر اہتمام ٹریفک ہیڈ کوارٹر گلبہار میں تقریب تقسیم انعامات کا

انعقاد کیا گیا جس میں چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت ، ٹریفک افسران و اہلکاروں نے

شرکت کی، چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے بہتر کارکردگی پر اہلکاروں میں توصیفی

اسناد اور نقد رقوم تقسیم کی۔ تقریب کے دوران چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے

ٹریفک عملے کی کارکردگی کو سراہا اور کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے افسران و اہلکارپہلے

سلام پھر کلام کی پالیسی پر عمل پیرا ہو کر ڈیوٹیاں انجام دیں اور ٹریفک قوانین پر عملدرآمد

کو یقینی بنانے کے لئے تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائیں۔ بہتر کارکردگی دکھانے والوں کی حوصلہ افزائی کی جائیگی

پشاور میں ٹریفک قوانین ، پشاور میں ٹریفک قوانین ، پشاور میں ٹریفک قوانین

پشاور میں ٹریفک قوانین ، پشاور میں ٹریفک قوانین ، پشاور میں ٹریفک قوانین

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply