ناراض بلوچوں سے مذاکرات

نجی تقریبات میں پروٹوکول،سکیورٹی نہیں لونگا، عمران خان

Spread the love

پروٹوکول سکیورٹی نہیں لونگا

اسلام آباد(جے ٹی این آن لائن نیوز) وزیراعظم عمران خان نے آئندہ کسی نجی تقریب میں پروٹوکول

اور سکیورٹی کیساتھ نہ جانے کا فیصلہ کیا ہے۔منگل کووزیراعظم عمران خان نے ٹویٹ کرتے ہوئے

کہا آئندہ کسی نجی تقریب میں پروٹوکول اور سکیورٹی کیساتھ نہیں جائوں گا، ہمارا مقصد عوام کے

ٹیکس کا پیسہ بچانا اور لوگ کسی تکلیف میں مبتلا نہ کرنا ہے ۔ پی ٹی آئی کے وزرائے اعلی،

گورنرز اور وزرا کی سکیورٹی اور پروٹوکول پر بھی نظرثانی کررہا ہوں۔ اگلے کابینہ اجلاس میں

اس حوالے سے جامع پالیسی پر فیصلہ کریں گے، ہم عوام کو مرعوب کرنیوالے نوآبادیاتی کلچر کا

خاتمہ کریں گے۔وزیر اعظم کے اعلان سے قبل وزیر اطالاعات فواد چوہدری نے کہا تھا وزیر اعظم

نے وزرائے مملکت، وزرا اور دیگر شخصیات کی جانب سے پروٹوکول اور سکیورٹی کے معاملات

کا جائزہ لیتے ہوئے ہدایت کی کہ اس حوالے سے نظام کا ازسرنو جائزہ لیا جائے۔ وزیر اعظم کو یہ

رپورٹ آئی کہ ہماری حکومت کے صوبائی اور وفاقی اکابرین وہ پروٹوکلز زیادہ استعمال کررہے ہیں

اور وزیر اعظم نے کہا میں خود رات کو اس لیے شادی اور کھانوں پر نہیں جاتا کیونکہ مجھے لگتا

ہے میرے جانے سے لوگوں کو تکلیف ہو گی اور ایک غیرمعمولی پروٹوکول سے پرہیز کرنا چاہیے

لہٰذا انہوں نے اس حوالے سے سختی سے ہدایت کی ہے اور تمام متعلقہ محکموں کو بھی بتا دیا گیا ہے

جبکہ تمام وزرا، گورنرز اور صوبائی اکابرین کو بھی بتا دیا گیا ہے کہ آپ اپنے پروٹوکولز میں کمی

لائیں۔ دوسری طرف دریں اثنا کمیونسٹ پارٹی چائینہ کے ورچوئل سربراہ اجلاس سے خطاب کرتے

ہوئے وزیراعظم عمران خان نے چین اور پاکستان کو’’ آئرن برادر‘‘ قرار دیتے ہوئے پاکستان عالمی

امن، ترقی اور بین الاقوامی نظام برقرار رکھنے کیلئے اس کی کاوشوں کی مکمل حمایت کا اعلان کیا

ہے۔وزیراعظم نے کہا کرپشن اور غربت کے خاتمے کے حوالے سے چین پوری دنیا کیلئے مثال ہے،

پاکستان میں تحریک انصاف کی حکومت ملکی ترقی کیلئے اسی وڑن پر عمل پیرا ہے۔ سی پیک

منصوبہ علاقائی روابط بڑھانے کا سبب بنے گا۔ کمیونسٹ پارٹی آف چائینہ کے 100ویں یوم تاسیس پر

دلی مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ 1921ء میں کمیونسٹ پارٹی آف چائینہ کا قیام عالمی تاریخ میں انتہائی

دورس اثرات کا حامل واقعہ تھا۔ اس کی قیادت کے وژن نے چینی قوم کے جذبوں کو جلا بخشی۔

کمیونسٹ پارٹی چائینہ (سی پی سی) اور پاکستان تحریک انصاف جدوجہد،عزم اور ثابت قدمی کے

مشترکہ جذبے کی بھی حامل ہیں۔ سی پی سی کا چینی قوم کوعظیم تر بنانے اور پی ٹی آئی کا ’’نیا

پاکستان‘‘ وڑن دونوں ممالک کے عوام کی امنگوں کا آئینہ دار ہے۔ پاکستان تحریک انصاف ملک میں

احتساب، شفافیت، میرٹ اور اسلامی فلاح وبہبود کے سنہری اصولوں پر قائم ہوئی۔ اشرافیہ کے تسلط

اور اقربا پروری کے خاتمے کیلئے پی ٹی آئی تشکیل دی۔ پی ٹی آئی قانون کی بالا دستی، مساوات اور

انصاف کے مشن پر سختی سے کاربند ہے۔ بنیادی مفادات کے امور میں ایک دوسرے کی حمایت

کرتے ہیں۔ عوامی خدمت سے سیاسی جماعتیں عوامی حمایت حاصل کر سکتی ہیں۔ انسانیت کیلئے

مشترکہ مستقبل جیسے باوقار مقصد کیلئے مل کر آگے بڑھنا ہوگا۔وزیراعظم نے حکومت کی جانب

سے سماجی بہبود اور ترقی کیلئے اٹھائے گئے اقدامات پر بات کرتے ہوئے کہا کہ خط غربت سے

نیچے زندگی بسر کرنے والے خاندانوں کو صحت کی مفت سہولیات فراہم کرنا چاہتے ہیں۔ ہم نے

صحت کے شعبہ میں اصلاحات کے حوالے سے یونیورسل ہیلتھ کوریج کو اپنی ترجیح بنایا۔احساس

پروگرام ایشیا بھرمیں سماجی تحفظ کے بڑے اورنمایاں پروگراموں میں سے ایک ہے۔ احساس

پروگرام کے دوسرے مرحلے میں 80 لاکھ مستحقین کو سماجی تحفظ فراہم کریں گے۔ احساس پروگرام

خطے میں سماجی تحفظ کے پروگراموں میں سے ایک ہے۔ دریں اثنا وزیر اعظم عمران خان سے

وزیر امور کشمیر علی امین گنڈاپوراورآزادکشمیر کے سابق وزیر اعظم و پی ٹی آئی آزاد جموں و

کشمیر کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے وزیر اعظم ہائوس اسلام آباد میں اہم و خصوصی

تفصیلی ملاقات کی ۔اس موقع پر فیصلہ کیا گیا کہ وزیر اعظم عمران خان آزاد کشمیر میں پی ٹی آئی

آزاد جموں و کشمیر کے امیدواروں کی انتخابی مہم کے سلسلے میں آزاد کشمیر کے مختلف ڈویژنز

میں جلسوں سے خطاب کریں گے۔ پروگرام کے مطابق وزیر اعظم عمران خان سوموار 12جولائی

شام پانچ بجے میرپور میں جلسے سے خطاب کریں گے جبکہ 18 جولائی کو باغ میں اور 23 جولائی

کو مظفرآباد میں انتخابی مہم کے آخری جلسے سے خطاب کریں گے۔اس موقع وزیر امور کشمیر علی

امین گنڈاپوراورآزادکشمیر کے سابق وزیر اعظم و پی ٹی آئی آزاد جموں و کشمیر کے صدر بیرسٹر

سلطان محمود چوہدری نے وزیر اعظم عمران خان کو آزاد کشمیر میں جاری پی ٹی آئی ازاد جموں و

کشمیر کے امیدواروں کی انتخابی مہم پر بریفنگ بھی دی اوردونوں رہنمائوں نے وزیر اعظم کو اس

بات کا یقین دلایا کہ پی ٹی آئی انشاء اللہ انتخابات میں بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کرے گی اور

انشا ء اللہ ایک ایسی آزاد کشمیر میں ایک ایسی حکومت تشکیل دی جائے گی جو مسئلہ کشمیر کو

اٹھانے اور آزاد کشمیر میں عوام کی بہتری اور خوشحالی لانے کیلئے اقدامات اٹھائے گی۔آزاد کشمیر

میں عوام پی ٹی آئی کووزیر اعظم عمران خان کے ویژن کو آگے بڑھانے اور عام آدمی کی حالت

زاربہتری کیلئے ووٹ دینا چاہتے ہیں۔وزیر امور کشمیر علی امین گنڈاپوراورآزادکشمیر کے سابق

وزیر اعظم و پی ٹی آئی آزاد جموں و کشمیر کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری وزیر اعظم

پاکستان عمران خان کاانتخابی مہم کے لئے جلسوں میں شرکت پر آمدگی کیلئے خصوصی شکریہ ادا

کیا۔ اس موقع پر دونوں رہنمائوں نے اپنی حالیہ میرپور ڈویژن میں انتخابی مہم چلانے کی تفصیلات

سے بھی وزیر اعظم عمران خان کو آگاہ کیا۔

پروٹوکول سکیورٹی نہیں لونگا

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply