پاکستان ایٹمی طاقت،ہمارے بغیر خطے کے بارے میں کوئی فیصلہ نہیں کیا جاسکتا، فواد چوہدری

Spread the love

پاکستان ایٹمی طاقت

اسلام آباد(جے ٹی این آن لائن نیوز) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین نے کہا ہے

کہ پاکستان کے اندرونی چیلنجز کا بیرونی چیلنجز سے گہراتعلق ہے، ہم نے اپنی صلاحیتوں کو بڑھانا

ہے ،پاکستان ایک عظیم ، ساتویں ایٹمی طاقت اور دنیا کی پانچویں بڑی قوم ہے، ہمارے بغیر خطے

کے بارے میں کوئی فیصلہ نہیں کیا جاسکتا، چیلنجز کا مقابلہ کرنا مشکل ضرورہے لیکن ناممکن نہیں

، دنیا میں ایک نئی سوچ نے جنم لیا ہے ، مسائل جنگوں سے حل نہیں کیے جا سکتے،بیانیہ اور رائے

کی جنگ تیزی سے پروان چڑھ رہی ہے،چیلنجز کا مقابلہ کرنا مشکل ضرور ہے نا ممکن نہیں۔وار

فئیر کیلئے اپنی صلاحیتوں کو بڑھانا پڑے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو لا فیئر پاکستان کے

موضوع پر ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ چوہدری فواد حسین نے لا فیئر کاپس منظر

بتاتے ہوئے کہاکہ عالمی جنگوں کی تباہ کاریوں کے بعد دنیا میں یہ احساس پیداہوا کہ مسائل کو تصادم

کی بجائے عالمی قانون کے تحت حل کیا جائے۔ اسی حوالے سے لافیئر کا تصور سامنے آیا۔ انہوں نے

کہا کہ ابتدا میں عالمی لافیئر کا کوئی منفی استعمال نہیں تھا لیکن بعد ازاں کسی حریف ملک کو طاقت

کااستعمال کئے بغیر دباؤ میں لانے کے لئے لا فیئر کا استعمال کیا جانے لگا۔انہوں نے کہا کہ نائن

الیون کے بعد لافیئر کاجدید استعمال سامنے آیا ، خود پاکستان کے خلاف فیٹف کی صورت میں اسی

لافیئر کو بروئے کار لایا گیا۔ پاکستان میں قانون کے حوالے سے بڑی مضبوط بنیاد ہے اور عالمی

قوانین پر کام کرنے والے نامور قانون دان موجود ہیں لیکن اس حوالے سیدنیا میں ہونے والے پیشرفت

کے مطابق پاکستان کے نظام کو اپ ڈیٹ نہیں کیا جا سکا۔ انہوں نے کہا کہ اپنے نظام کو جدید

ٹیکنالوجی سے ہم آہنگ بنائے بغیر مطلوبہ مقاصد نہیں کئے جا سکتے ۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ اس

وقت پاکستان کے خلاف عالمی لا فریم ورک کو فیٹف اور آزادی اظہار رائے جیسیعوامل کو بنیاد بنا

کر لافیئر کے طور پر استعمال کیاجا رہا ہے جس میں ہمارے اپنے ملک کیبعض لوگ بھی شامل ہو

جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ اہم مسئلہ ہے اس کے بار ے میں ہمیں بحیثیت قوم ذمہ دارانہ

کرداراداکرناچاہیے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں ماڈرن لا فیئر کے حوالے سے اپنی صلاحیتوں کو بڑھانا

چاہیے، اس حوالے سے میڈیاکا کردار بہت اہم ہے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف

جنگ میں پاکستان کے 70 ہزا ر لوگ شہید ہوئے ، پاکستان کی قربانیو ں کو موثر طریقے سے اجاگر

کرنے کی ضرورت ہے۔ مغرب میں ہماری ان قربانیوں پر کوئی ایک بھی کتاب نہیں لکھی گئی۔ انہوں

نے کہا کہ پاکستان کے اندرونی چیلنجز کا بیرونی چیلنجز سے گہراتعلق ہے۔ ماضی کی طرح اب بھی

امریکا افغانستان سے نکل کر جا رہا ہے تو اس سے مسائل پیداہوں گے اور پاکستان پر بھی اثرات

مرتب ہوں گے۔

پاکستان ایٹمی طاقت

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply