پاکستانی ڈراموں میں افیئرز کے سوا کچھ نہیں دکھایا جاتا،خاتون اول

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

پاکستانی ڈراموں خاتون اول

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز)صدر مملکت عارف علوی کی اہلیہ خاتون اول

ثمینہ علوی نے پاکستانی ڈراموں میں ایک جیسے ہی غیر مہذب موضوعات

دکھائے جانے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے ملکی ڈراموں میں غلط

چیزوں کے علاوہ کچھ نہیں دکھایا جاتا۔ایک انٹرویو میں خاتون اول نے اعتراف کیا

کہ وہ ایک جیسے ہی ولگر موضوعات کی وجہ سے پاکستانی ڈرامے کم دیکھتی

ہیں، کیونکہ ان میں افیئرز اور غلط چیزوں کے علاوہ کچھ نہیں دکھایا جاتا۔خاتون

اول نے انکشاف کیا کہ انہیں پاکستانی ڈرامے دیکھنے سے ڈپریشن ہوجاتا ہے،

کیونکہ ان میں کوئی بھی ڈھنگ کی چیز نہیں دکھائی جاتی۔اہلیہ صدر مملکت کے

مطابق پاکستانی ڈراموں میں کوئی بھی تعمیری کام نہیں کیا جا رہا اور انہوں نے

اس مسئلے پر کچھ ٹی وی شخصیات سے بات بھی کی، جنہوں نے انہیں بتایا ولگر

اور بولڈ موضوع پر بنے ڈراموں کی ہی ریٹنگ آتی ہے۔ ڈراموں میں غلط چیز یں

دکھانے کی وجہ سے ہی آج کل لڑکے اور لڑکیاں غلط کام کر رہے ہیں ،ڈراموں

میں جس طرح کی چیزیں دکھائی جائیں گی، بچے ویسا ہی کریں گے، اسلئے

ڈراموں کے موضوعات تبدیل اور انہیں تعمیری ہونا چاہیے۔انہوں نے ملک میں نئی

نسل میں منشیات کے استعمال کو بھی ڈراموں سے جوڑتے ہوئے کہا اسی وجہ

سے منشیات کا استعما ل بڑھ رہا ہے۔ پاکستان ٹیلی وژن (پی ٹی وی) پر نشر

ہونیوالے ترک ڈرامے ارطغرل غازی کی تعریف کی اور کہا اس میں کسی بھی

چیز کو غیر مہذب طریقے سے نہیں دکھایا گیا۔ثمینہ علوی نے بتایا خاتون اول

ہونے اور سیاست پر نظر رکھنے کیلئے وہ ٹاک شوز دیکھتی ہیں۔ بشریٰ بی بی کی

تعریف کرتے ہوئے انہیں مہذب شخصیت کی ما لک خاتون قرار دیا اور کہا عام

عوام میں پائے جانیوالے خیالات غلط ہیں ۔ ایوان صدر کے حوالے سے انہوں نے

انکشاف کیا کہ ملک کی اتنی بڑی اہم ترین عمارت میں پانی لیک ہوتا ہے ماضی

میں اسکا خیال نہیں رکھا گیا۔خاتوں اول نے کہا بداخلاقی کے واقعات کو سخت

سزاؤں کے تحت ہی کم کیا جا سکتا ہے۔

پاکستانی ڈراموں خاتون اول

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply