پاکستانی لڑکیوں کی سمگلنگ میں ملوث چینی گینگ کے مزید 7 ملزمان گرفتار

Spread the love

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی تحقیقاتی ادارے ( ایف آئی اے) کے انسانی

سمگلنگ سیل نے پاکستانی لڑکیوں سے شادی کرنے اور ان سے جسم فروشی

کرانے والے گروہ کے چینی سربراہ سمیت مزید 7 افراد کو گرفتار کرلیا۔ایف آئی

اے کے مطابق انسانی سمگلنگ سیل راولپنڈی نے کارروائی کرتے ہوئے 3 چینی

باشندوں سمیت 7 افراد کو گرفتار کرلیا جن میں گینگ کا سربراہ چینی باشندہ

سونگ چو یونگ بھی شامل ہے۔ذرائع کے مطابق ڈی جی ایف آئی اے کے سامنے

دو خواتین پیش ہوئیں جن کی درخواست پر ایف آئی اے اسلام آباد نے انکوائری

شروع کی اور ڈپٹی ڈائریکٹر کامران علی کی سربراہی میں ٹیم نے کارروائی کی۔

گرفتار کیے جانے والوں میں 2 جوڑے بھی شامل ہیں جبکہ دو چینی باشندوں نے

دو پاکستانی لڑکیوں کو اپنی بیوی ظاہر کیا۔پاکستانی خواتین سے شادی اور ان سے

جسم فروشی کا مکروہ دھندہ کرانے والے گروہ کے اب تک گرفتار ہونے والے

ملزمان کی تعداد 19 ہوگئی۔ڈپٹی ڈائریکٹر ایف آئی اے کامران علی کے مطابق

گرفتار ملزمان خود کو جعلی طور پر مسلمان ظاہر کرتے اور پاکستانی خواتین سے

شادی کر کے ان سے جسم فروشی کراتے تھے جب کہ ملزمان خواتین کے اعضا ء

بھی فروخت کرنے میں ملوث تھے۔

Leave a Reply