ہیکنگ، ڈیٹا لیکیج سے محفوظ پاکستانی ایپلی کیشن بیپ تیاری کے قریب

ہیکنگ، ڈیٹا لیکیج سے محفوظ پاکستانی ایپلی کیشن بیپ تیاری کے قریب

Spread the love

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن ٹیکنالوجی نیوز) پاکستانی ایپلی کیشن بیپ

وفاقی وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی (آئی ٹی) میں ہیکنگ اور ڈیٹا لیکیج سے محفوظ

ایپلی کیشن کی تیاری پر اہم پیش رفت ہوئی ہے۔ وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی

امین الحق کے مطابق وزارت انفارمیشن سرکاری امور کی انجام دہی کے لیے ایپ

تیار کرنے کے قریب ہے۔ سرکاری ایپ کا نام ” بیپ ” ہو گا جس میں ٹیکسٹ اور

آڈیو کال ہو سکے گی۔ ڈیٹا محفوظ تر بنانے کیلئے جدید ترین بلاک چین ٹیکنالوجی

کا استعمال کیا گیا ہے۔

=–= ٹیکنالوجی اور سوشل میڈیا سے متعلق مزید خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

واضح رہے گذشتہ روز اسرائیلی ہیکنگ سافٹ وئیر عمران خان کے خلاف بھی

استعمال ہونے کا انکشاف ہوا تھا۔ غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا کہ بھارت ان

ممالک میں شامل ہے جو اسرائیل کی کمپنی کے جاسوسی کے سافٹ ویئر کا

استعمال کر رہا تھا، جس کے ذریعے دنیا بھر میں صحافیوں، حکومتی عہدیداروں

اور انسانی حقوق کے کارکنوں کے سمارٹ فونز کی کامیاب نگرانی کی جاتی رہی۔

واشنگٹن پوسٹ کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ ریکارڈ کے مطابق مختلف نمبرز میں

ایک وزیراعظم کے زیر استعمال تھا۔ ذرائع نے بتایا کہ جب سافٹ وئیر استعمال ہوا

تب عمران خان وزیراعظم نہیں تھے۔ سافٹ وئیر نواز شریف کی حکومت میں

عمران خان کیخلاف استعمال ہوا۔

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

ذرائع کا کہنا ہے نواز شریف کے دور میں یہ اسرائیلی سافٹ وئیر حساس اداروں

اور سیاستدانوں کے خلاف استعمال ہوا۔ اسرائیلی کمپنی کے تیار کردہ جاسوسی

کرنے والے سافٹ ویئر کی مدد صحافیوں، سیاستدانوں، کاروباری شخصیات، سفرا

اور سماجی کارکنوں سمیت 50 ہزار افراد کی جاسوسی کیے جانے کا انکشاف ہوا۔

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ اور برطانیہ کے قومی اخبار دی گارڈئین کی رپورٹ

میں انکشاف کیا گیا کہ اسرائیلی کمپنی کے جاسوسی کے سافٹ وئیر کے ذریعے

دنیا بھر میں کم ازکم 50 ہزار افراد کی مبینہ جاسوسی کی گئی جبکہ جاسوسی کا

دائرہ کم ازکم 50 ممالک تک پھیلا ہوا تھا۔ عمران خان کا نمبر ہیک ہونے کے

معاملہ پر گذشتہ روز اعلیٰ عسکری و سول قیادت کی بیٹھک بھی ہوئی جس کے

بعد ملک دشمنوں کی ہیکنگ سے بچنے کیلئے خصوصی ایپلی کیشن کی تیاری کا

فیصلہ کیا گیا تھا۔

پاکستانی ایپلی کیشن بیپ ، پاکستانی ایپلی کیشن بیپ ، پاکستانی ایپلی کیشن بیپ

Leave a Reply