نیب کا سراج درانی کے پروڈکشن آرڈر ،سپیکر سندھ اسمبلی کا گرفتاری چیلنج کرنے کا فیصلہ

Spread the love

قومی احتساب بیورو(نیب) کے حکام نے سپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کے پروڈکشن آرڈر کو چیلنج کرنے کا پلان بنالیا، چیئرمین کی منظوری کا انتظار ہے، جبکہ سپیکر سندھ اسمبلی کے اہلخانہ نے بھی گرفتاری کیخلاف عدالت جانے کا فیصلہ کرلیا۔سپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کے پروڈکشن آرڈر کے معاملے پر نیب حکام نے اپنے وکلا کو تیار رہنے کی ہدایت کردی۔ نیب وکلاء کے مطابق چیئرمین نیب کا خط ملتے ہی پروڈکشن آرڈر کو چیلنج کر دیں گے، ادھر آغا سراج درانی کے وکیل نے بھی تیاری مکمل کرلی ہے اور انکا کہنا ہے نیب نے پروڈکشن آرڈر کو عدالت میں چیلنج کیا تو ہم دفاع کرینگے جبکہ آغا سراج درانی کی گرفتاری کو چیلنج کرنے جارہے ہیں، سیکر ٹر ی اسمبلی کسی بھی گرفتار رکن کا پروڈکشن آرڈر جاری کرسکتا ہے۔ دوسری طرف آغا سراج درانی کی گرفتاری کے بعد پیپلز پارٹی کے رہنما سابق وزرا اعجاز جاکھرانی اور جام خان شورو نیب کی کارروائی کے خوف کے باعث حفاظتی ضمانت لینے سندھ ہائی کورٹ پہنچ گئے، جام خان شورو نے نیب انکوائریز میں گرفتاری سے بچنے کیلئے درخواست دائر کرتے ہوئے کہا نیب ان کیخلاف مختلف انکوائریز کر رہا ہے، اگرچہ سندھ ہائیکو رٹ سے ضمانت پر ہوں لیکن مزید الزامات میں گرفتاری کا خدشہ ہے،استدعا ہے نیب کو مزید کسی انکوائری سے روکا اور گرفتاری کو ہائیکورٹ کی اجازت سے مشروط کیا جائے، اسی طرح سابق وفاقی وزیر اعجاز حسین جاکھرانی نے بھی ضمانت قبل از وقت گرفتاری کی درخواست دائر کر دی، ان پر آمدن سے زائد اثاثے بنانے کا الزام ہے۔

Leave a Reply