نیب ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس،بدعنوانی کے 4 ریفرنسز دائرکرنے اور3انکوائریوں کی منظوری

Spread the love

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس قومی

احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس(ر) جاوید اقبال کی ز یر صد ارت نیب

ہیڈکوارٹر ز اسلام آبادمیں منعقد ہوا ۔اجلاس میںڈپٹی چیئرمین نیب ، پراسیکیوٹر

جنرل اکائو نٹیبلٹی ،ڈی جی آپریشن،ڈی جی نیب راولپنڈی اور دیگر سینئر افسران

نے شرکت کی۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں بدعنوانی

کے4 ریفرنسز دائر کر نے کی منظوری دی گئی۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس

میںچوہدری رشید احمد،سابق ڈائریکٹر جنرل پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ اور

دیگرکیخلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دی۔ملزمان نے

اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے قومی خزانے سے 28.5 ملین روپے کی

رقم ایڈورٹائزنگ ایجنسی کیساتھ مل کرنکلوانے کی کوشش کی جس کو بر وقت

کارروائی کے ذریعے پی اے آر سی نے ناکام بنا دیا۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس

میں نعیم الدین خان سابق صدر بنک آف پنجاب اور دیگرکیخلاف بد عنوانی کا

ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دی۔ملزمان پر اختیا رات کا ناجائز استعمال کرتے

ہوئے بنک آف پنجاب کے شیئرز کی خرید وفروخت میں انسائڈٹریڈنگ کرنے کا

الزام ہے۔جس سے قومی خزانے کو 10.385 ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو

بورڈ کے اجلاس میںگلاب خان سیکرٹری کراچی پورٹ ٹرسٹ آفیسرز کووآپریٹو ہا

ئوسنگ سوسائٹی اور دیگرکیخلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری

دی۔ملزمان پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے سرکاری زمین کو غیر

قانونی طور پر قواعد و ضوابط کیخلاف من پسند افراد کو الاٹ کرنے کا الزام

ہے،جس سے قومی خزانے کو 110ملین روپے کا نقصان پہنچا۔نیب کے ایگزیکٹو

بورڈکے اجلاس میں منظور قادر سابق ڈی جی سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی

(SBCA)کراچی اور دیگرکیخلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری

دی۔ملزمان پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے نہر ِاخیام کراچی میں

سرکاری زمین میسرز فرینڈز ایسوسی ایٹس کومبینہ طور پرغیر قانونی طور پر

الاٹ کرنے کا الزام ہے،جس سے قومی خزانے کو3اربروپے کا نقصان پہنچا۔قومی

احتسا ب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں 3انکوائریوں کی منظوری دی

گئی جن میںسیدطلعت محمودسابق چیف آپریٹنگ آفیسر زرعی ترقیاتی بنک

لمیٹڈ(ZTBL) اور دیگر،ناصر اقبال بوسال رکن قومی اسمبلی اورامداد اللہ بوسال

سابق سیکرٹری ٹووزیر اعلیٰ پنجاب اورمیسرز رداری گر وپ پرائیویٹ لمیٹڈ شامل

ہیں۔ نیب کے ایگزیکٹو بورڈنے پنجاب رینیوایبل انرجی کمپنی لمیٹڈکی

انتظامیہ،افسران ،اہلکاران اور دیگر اور قا ئد اعظم ونڈپاورکمپنی لمیٹڈکی

انتظامیہ،افسران ،اہلکاران اور دیگرکیخلاف اب تک عدم شواہد کی بنیاد پرقانون

کے مطابق انکوائری ختم کرنے کی منظوری دی۔ چیئرمین نیب جاوید اقبال نے کہا

میگا کرپشن کے مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا نیب کی اولین ترجیح ہے۔ نیب

“ا حتسا ب سب کیلئے” کی پالیسی پر سختی سے عمل پیر ا ہے۔ملک سے بدعنوانی

کا خاتمہ اور عوام کی لوٹی گئی رقم کی واپسی کیلئے تمام و سائل بروئے کار لا ر

ہے ہیں ۔بدعنوانی تمام برائیوں کی جڑ ہے جس کا خاتمہ نیب سمیت تمام پاکستانیوں

کی مشترکہ ذمہ داری ہے۔ انہوں نے نیب کے تمام ڈائریکٹر جنرلز کو ہدایت کی کہ

وہ بد عنوان عناصر ، اشتہاری اور مفرور ملزمان کے مقدمات کو قانون کے مطابق

منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے کوئی کسر اٹھا نہ رکھی جائے۔ نیب ملک سے

بدعنوانی کے خاتمہ کو اپنا قومی فریضہ سمجھتاہے اور نیب کا ایمان کرپشن فری

پاکستان ہے۔

Leave a Reply