Imran Khan Prim minister Pakistan

نیا پاکستان نئی سوچ اور مائنڈ سیٹ کا نام، 50 لاکھ گھروں کا ہدف پورا کرلیں گے، عمران خان

Spread the love

نیا پاکستان نئی سوچ

اسلام آباد(جے ٹی این آن لائن نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ نیا پاکستان در حقیقت نئی

سوچ اور مائنڈ سیٹ کا نام ہے، ہمارا احتساب 5 سال بعد ہونا چاہیے کہ ہم نے کیا کیا، 50لاکھ گھروں

کے منصوبے سے لوگوں کو گھر ملنا شروع ہو گئے ، دو نئے شہر بنا رہے ہیں جس سے 50لاکھ

گھروں کا ہدف پورا کرلیں گے،حکومت میں آئے تو پہلے دن ہی کہا گیا یہ فیل ہوگئے ہیں، بار بار

حکومت جانے کی پیش گوئیاں ہوتی رہیں، ہمیں عوام نے 5سال کے لیے مینڈیٹ دیا ۔جمعرات کواسلام

آباد میں وزیراعظم عمران خان نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 50لاکھ گھروں کے

منصوبے سے لوگوں کو گھر ملنا شروع ہو گئے ہیں، انتہائی غریب افراد کو 7ہزار سے زائد گھر بنا

کر دے دیے ہیں، دو نئے شہر بنا رہے ہیں جس سے 50لاکھ گھروں کا ہدف پورا کرلیں گے، 18ویں

ترمیم کے بعد اختیارات صوبوں کے پاس ہیں، چاہتے ہیں کہ سندھ حکومت بھی تعمیرات کے شعبے

میں دی گئی مراعات سے فائدہ اٹھائے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اگلے ماہ فوڈ سیکیورٹی کا

پورا پروگرام لارہے ہیں، حکومت میں آئے تو پہلے دن ہی کہا گیا یہ فیل ہوگئے ہیں، بار بار حکومت

جانے کی پیش گوئیاں ہوتی رہیں، ہمیں عوام نے 5سال کے لیے مینڈیٹ دیا ہے اور ہم پانچ سال کے

لیے آئے ہیں، پانچ سال بعد احتساب ہونا چاہیے کہ ہم نے ملک اور عوام کے لیے کیا کیا۔قبل ازیں

اسلام آباد میں محنت کشوں اور بیوا ؤں میں مکانات اور فلیٹس کی تقسیم کے لیے قرعہ اندازی کی

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ نیا پاکستان ہاؤسنگ پروگرام بہترین منصوبہ

ہے، نیا پاکستان ہاسنگ پروگرام میں تعمیر شدہ فلیٹس اور گھر شامل ہیں، 25 سال پرانے منصوبے کا

خواب حقیقت ہوگیا ہے، شہروں میں سرکاری ملازمین کے لیے بھی گھر بنانا نا ممکن ہوتا ہے، ہم

کسی پر احسان نہیں کررہے، یہ محنت کشوں کا حق ہے، ملک میں کبھی مزدور طبقے کیلئے نہیں

سوچا گیا، ہمیں ہم نے پیچھے رہ جانے والے طبقے کو اوپر لانا ہے۔ محنت کش کرائے کے مکان میں

رہتے ہیں، اب کرایہ مکان کی قسطوں میں جائے گا اور مکان ان کی ملکیت ہوجائے گا۔وزیر اعظم

نے کہا کہ نیا پاکستان نئی سوچ اور مائنڈ سیٹ کا نام ہے، حکومت ہر گھر اور ہرفلیٹ پر 3 لاکھ روپے

سبسڈی دے رہی ہے، حکومتی آمدنی بڑھتی رہے گی ہم قرضے بڑھاتے رہیں گے، امیر ترین ملک

بھی گھر نہیں بانٹ سکتے، اس منصوبے میں بینک شامل نہ ہوتے تو ہم یہ کام نہیں کرسکتے تھے،

متعلقہ قانون کیعدالت میں زیر التوا ہونے کے سبب اس کام میں 2 سال تاخیر ہوئی۔وزیر اعظم کا مزید

کہنا تھا کہ پہلی بارہم نے کنسٹرکشن انڈسٹری کو سہولتیں دی ہیں، ہماری کنسٹرکشن کی صنعت آگے

بڑھ رہی ہے، سیمنٹ اور سریے کی قیمت بڑھنے کی وجہ یہ ہے کنسٹرکشن انڈسٹری ترقی کررہی

ہے۔دوسری طرف وزیر عظم عمران خان نے لاپتہ افراد سے متعلق تمام تفصٰلات طلب کر لی ہیں۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان سے لاپتہ افراد کے لواحقین کی کمیٹی کے اراکین نے ملاقات

کی۔ اس موقع پر وفاقی وزیر شیریں مزاری اور زبیدہ جلال بھی موجود تھیں۔وزیراعظم نے لاپتہ افراد

سے متعلق تفصیلات طلب کرتے ہوئے پرنسپل سیکرٹری اعظم خان کو ذمہ داری دی کہ وہ انھیں

موجودہ صورتحال سے آگاہ کریں۔وزیراعظم نے ہدایت کہ کہ لاپتہ افراد کی بازیابی کے عمل سے

لواحقین کو مسلسل آگاہ رکھیں۔ خیال رہے کہ اسلام آباد میں 13 لاپتہ افراد کے لواحقین نے دھرنا دیا

ہوا ہے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پیداوار میں اضافہ کرکے ہی ملک کو قرضوں کی دلدل

سے نکالا جاسکتا ہے، حکومت شرحِ نمو اور سرمایہ کاری کے فروغ کیلئے ہر ممکنہ اقدام اٹھائے

گی، چھوٹی اور درمیانی درجے کی صنعتوں کے فروغ سے ملک میں دولت بھی پیدا ہوگی۔وزیراعظم

عمران خان کی زیرِصدارت معاشی استحکام و ترقی کے متعلق جائزہ اجلاس ہوا۔گورنر اسٹیٹ بینک

نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ چھوٹی اور درمیانی صنعتوں کو ضمانت کے بغیر قرضوں کی فراہمی

کا انتظام کیا جارہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت تقریبا 50فیصد نقصان کے رسک کی گارنٹی لے گی۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ ایس ایم ایز پر حکومت، اسٹیٹ بینک اور نجی بینکوں کے درمیان موثر

پارٹنرشپ بنائی جارہی ہے۔اجلاس میں وزیر اعظم عمران خان کوسپیشل ٹیکنالوجی زونز کے قیام میں

پیشرفت پر بھی بریفنگ دی گئی جبکہ چھوٹی اور درمیانی صنعتوں کے لیے سہولتوں کی فراہمی کی

رپورٹ بھی پیش کی گئی۔اجلاس کو بتایا گیا کہ اسلام آباد میں ٹیکنالوجی زون کے قیام کے لیے زمین

فراہم کی جاچکی ہے۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ حکومت شرحِ نمو اور سرمایہ

کاری کے فروغ کے لیے ہر ممکنہ اقدام اٹھائے گی، چھوٹی اور درمیانے درجے کی صنعتوں کے

فروغ سے معاشی عمل میں تیزی آئے گی جبکہ چھوٹی اور درمیانی درجے کی صنعتوں کے فروغ

سے ملک میں دولت بھی پیدا ہوگی۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ملک کو قرضوں کی دلدل سے

پیداوار میں اضافہ کرکے ہی نکالا جاسکتا ہے۔،وزیراعظم نے حکومتی رہنماؤں سے ملاقات کے

دوران صوبہ پنجاب اورصوبہ خیبرپختونخوا میں بلدیاتی انتخابات جلد کرانے کی ہدایت کی، وزیراعظم

نے اس موقع پر واضح طور پر ہدایات دیں کہ بلدیاتی حکومتیں عوام کی ضرورت ہیں، انہوں نے اس

عزم کا اعادہ کیا کہ ہر صورت بلدیاتی انتخابات کروائیں گے،وزیراعظم نے حکومتی رہنماؤں سے

ملاقات کے دوران پارٹی تنظیم کو بلدیاتی انتخابات کی تیاری کرنے کی واضح ہدایات بھی دیں،

وزیراعظم نے کہا کہ مقامی حکومتوں کے قیام سے عوام کے مسائل جلد حل ہوں گے۔

نیا پاکستان نئی سوچ

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply