نوازشریف علاج معاملہ،اپوزیشن کا سینیٹ اجلاس میں احتجاج،واک آ ئوٹ

Spread the love

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) ایوان بالا میں سابق وزیراعظم
نواز شریف کو علاج کی مناسب سہولتیں فراہم نہ کرنے پر اپوزیشن نے احتجاج اور واک
آ ئوٹ کیا،

جمعرات کو ایوان بالا کا اجلاس چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی صدارت میں ہوا توقائد
حزب اختلاف راجہ ظفر الحق نے کہا نواز شریف کو انجائنا مرض لاحق ہے اور ان کو5مرتبہ
دل کا درد ہوا، ان کیخلاف سنگدلانہ سلوک کیا جا رہا ہے،ان کو علاج کے حق ملنا چاہیے،
ان کیساتھ جو کچھ ہورہا ہے وہ ناقابل قبول ہے،

جبکہ وزیرمملکت پارلیمانی امور علی محمد خان نے پیشکش کی کہ اگر اپوزیشن مطمئن نہیں کہ
نواز شریف کا علاج صحیح نہیں ہو رہا تو سینیٹ کی کمیٹی تشکیل دی جائے جو جا کرنوازشریف
کے علاج معالجہ کا جائزہ لے اور جو سفارشات پیش کرے گی حکومت اس پر عمل کرے گی،

سابق وزیر اعظم نواز شریف سے ہمارا کوئی ذاتی جھگڑا نہیں وہ قابل احترام ہیں ان کے کیسوں سے ہماری حکومت کا کوئی تعلق نہیں، وہ کرپشن کے کیسوں میں جیل ہیں،ان کے علاج میں کوئی کمی نہیں برتی جائے گی ۔

ریاست تمام شہریوں کو صحت کو مساوی حقوق دینے کی پابند ہے، پنجاب حکومت کا کہنا ہے وہ ٹھیک ہیں۔

سینیٹر فیصل جاوید نے کہا عمران خان نے پنجاب حکومت کو ہدایات دی ہیں کہ ان کو علاج کی بہترین سہولیات دی جائیں، وہ جہاں سے علاج چاہتے ہیں ان کی اجازت دی جائے۔

Leave a Reply