نعروں کا وقت ختم حکومت بتائے تبدیلی کیلئے کیا کررہی ہے، مہوش حیات

نعروں کا وقت ختم حکومت بتائے تبدیلی کیلئے کیا کررہی ہے، مہوش حیات

Spread the love

کراچی(جے ٹی این آن لائن شوبز نیوز) نعروں کا وقت ختم

اداکارہ مہوش حیات نے ملک میں خواتین اور بچوں کیخلاف بڑھتے جرائم کے

بارے میں سوال کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت بتائے ملک میں نظام کی

تبدیلی کے لیے کیا کر رہی ہے۔ اداکارہ مہوش حیات نے اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس

پر ملک میں خواتین اور بچوں پر ہونے والے جنسی اور صنفی تشدد کے بارے

میں آواز اٹھاتے ہوئے کہا ہیش ٹیگز اور نعروں کا وقت ختم ہو چکا۔ اداکارہ نے

مطالبہ کرتے ہوئے کہا حکومت بتائے کہ نظام کو تبدیل کرنے کے لیے کیا کرنے

جا رہی ہے۔ معاشرے میں جنسی اور صنفی تشدد اور امتیازی سلوک کی دیگر

اقسام کو نظام میں تبدیلی کے بغیر ختم نہیں کیا جا سکتا۔

=–= شوبز دنیا سے متعلق مزید دلچسپ خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

اپنی ایک اور ٹوئٹ میں مہوش حیات نے کہا ملک میں قوانین موجود ہیں۔ ہمیں ان

قوانین کے نفاذ کو زیادہ سخت اور متاثرہ افراد کے لیے کم تکلیف دہ بنانے کی

ضرورت ہے۔ اداکارہ مہوش حیات نے ملک میں عدالتی نظام پر سوال اٹھاتے

ہوئے کہا ملک میں عدالتی نظام خطرناک، غیر موثر اور فرسودہ ہے۔ مہوش حیات

نے ایک اور ٹوئٹ میں کہا تشدد اور زیادتیوں سے پاک محفوظ زندگی گزارنا ہر

شخص کا بنیادی حق ہے۔ کسی کو بھی زندگی گزارتے ہوئے خوف زدہ نہیں ہونا

چاہئے۔ یہ آسانی سے قابل قبول نہیں ہے اور اسے نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔ بے

حسی کوئی آپشن نہیں ہے۔ کسی دوسرے متاثرہ شخص کا ہیش ٹیگ بننے سے

پہلے ایکشن لینا ہو گا، کارروائی کرنا ہو گی۔

=-،-= انسٹاگرام سے اب تک گالیاں ہی سیکھی ہیں، صبور علی

اداکارہ صبور علی اور اداکار منیب بٹ نے سوشل میڈیا پر اداکاروں کو ٹرولنگ کا

نشانہ بنانے والے صارفین سے متعلق گفتگو کی ہے۔ صبور علی اداکار منیب بٹ

کے ہمراہ حال ہی میں نجی ٹی وی چینل کے ایک شو میں جلوہ گر ہوئی تھیں جہاں

میزبان کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے شوبز کی دونوں شخصیات کی جانب سے

مختلف موضوعات پر گفتگو کی گئی۔ دوران شو میزبان نے منیب بٹ کو قربانی کا

حوالہ دیتے ہوئے سوال کیا کہ آیا آج کل لوگ اداکاروں کے حوالے سے اتنے

فیصلہ کن کیوں ہو گئے ہیں؟ کوئی زیادہ کرے تو کہتے ہیں یہ زیادہ دکھاوا کر رہا

ہے اورکوئی قربانی نہ دکھائے تو کہا جاتا ہے یہ برگرز ہیں اس لیے۔ اس پر اداکار

منیب بٹ کا کہنا تھا کہ میرے خیال میں ایسا اس لیے ہے کہ سوشل میڈیا آ جانے

کے بعد ہر شخص اپنی رائے دیتا ہے اور آج ہر شخص کے ہاتھ میں فون ہے اس

لیے وہ فورا اپنی رائے دیتا ہے۔

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

منیب نے کہا کہ قربانی کریں لیکن دکھاوے کے لیے نہ کریں، سوشل میڈیا پر نہ

بھی ڈالا جائے تو خیر ہے لیکن اگر آپ سوشل میڈیا پر ڈالیں گے تو لوگ تبصرے

تو کریں گے لیکن اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ اداکارکا کہنا تھا کہ اچھے بھلے

ایسے لوگ بھی موجود ہیں جنہوں نے جعلی اکانٹ صرف اپنی فرسٹریشن نکالنے

کے لیے ہی بنا رکھے ہیں۔ اسی موضوع پر گفتگو کرتے ہوئے اداکارہ صبور علی

نے کہا کہ میں نے انسٹاگرام سے اب زیادہ تر گالیاں ہی سیکھیں ہیں جو کہ ہمیں

پڑتی ہیں۔ صبور علی کی بات پر میزبان نے بھی بتایا کہ انہیں بھی روز صبح 10

بجے باقاعدگی سے ارطغرل نامی فیک آئی ڈی سے نامناسب میسیجز بھیجے جاتے

ہیں جنہیں وہ ڈیلیٹ نہیں کرتے ہیں اور نہ بلاک کرتے ہیں۔

نعروں کا وقت ختم ، نعروں کا وقت ختم ، نعروں کا وقت ختم ، نعروں کا وقت ختم

Leave a Reply