نظریاتی آزادی کی جنگ لڑ رہے ہیں، فضل الرحمن

Spread the love

جمعیت علماء اسلام کے امیر مولانا فضل الرحمن کی اپیل پر سترہ فروری کو مردان میں ملین مارچ کے سبب شاہ منصور میں عا لمی تحفظ ختم نبوت کے سلسلے میں تیرہ فروری کا تاریخی اجتماع موخر کر دیاگیا،اس ضمن میں گزشتہ روزسربراہ جے یو آئی ف نے تعلیم القرآن شاہ منصور اور بعد ازاں خانقاںنقشبندیہ شاہ منصور میں علماء اور طلباء کے اجتماعات سے خطاب بھی کیا جبکہ ممتاز عالم دین شیخ القر آن حضرت مو لا نا نورا لہادی المعروف صاحب حق صاحب اور بعد ازاں عالمی تحفظ ختم نبوت کے مرکزی رہنما و ضلعی امیر مولانا اعزاز الحق کیساتھ خصوصی ملا قات بھی کی انہوں نے مولانا اعزاز الحق کا بھر پور انداز میں شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے اور شاہ منصور کا عالمی اجتماع موخر کرنے کی درخواست قبول کر لی ، اب یہ اجتماع 23اور 24فروری کو ہو گا۔مولانا فضل الرحمن نے کہا ناموس رسالت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائیگا ،مسلمان تحفظ نا مو س رسالت کی خاطر جانیں بھی قر بان کر سکتے ہیں، ہم نظریاتی آزادی کی جنگ لڑ رہے ہیں، سترہ فروری کو مردان میں تحفظ ناموس رسالت اور ملین مارچ میں بھر پور قوت کا مظاہرہ کرینگے جس میں لاکھوں کی تعداد میں لوگ بھر پور انداز میں شرکت کرینگے،علماء کرام ، طلباء ، کارکنان جمعیت اور ہر مکاتب فکر کے لوگوں سے اپیل ہے وہ سترہ فروری کو ہونیوالے ملین مارچ و ختم نبوت و ناموس رسالت کے حوالے سے قومی مظا ہرے میں بھر پور انداز میں شرکت کریں۔ ضلع صوابی کے مسلمانوں نے ہمیشہ دین اسلام کی سر بلندی کیلئے ہر دور میں بھر پور کر دار ادا کیا ہے۔

Leave a Reply