51

نئی دہلی،ہندو ئوں کی عجیب و غریب منطق، کورونا وائرس کا پتلا بنا کر جلا دیا

Spread the love

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارت میں ہندو ئوں کے مذہبی تہوار ہولی میں کورونا وائرس کو شیطان

تصور کرتے ہوئے اس کا پتلا بنا کر جلایا گیا،پتلے کا نام ڈائنو سار کے مترادف کورونا سور رکھا

گیا، ہندوئوں کا خیال ہے کہ یہ برائی کے خاتمے کا تہوار ہے اس لئے کورونا بھی ایک عفریت ہے

اس کو جلا کر اس سے چھٹکارا پایا جا سکتا ہے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق چین سے پھیلنے والے

خطرناک کورونا وائرس نے لاکھوں افراد کو متاثر کیا ہے جب کہ کورونا وائرس بھارت میں بھی

تیزی سے پھیل رہا ہے۔کورونا وائرس نے دنیا بھر میں خوف پیدا کردیا ہے اور اسی ضمن میں ہندو

برادری کے ہولی کے تہوار کے موقع پر ممبئی میں کورونا وائرس کو ایک شیطان تصور کیا گیا اور

اس کا پتلا بناکر جلایا گیا۔ممبئی میں چند لوگوں نے اپنی مذہبی روایت ہولیکا داہان کے پیشِ نظر ایک

پتلا تیار کیا جس کا نام انہوں نے ڈائنا سور سے جوڑتے ہوئے کوروناسور رکھا جسے بعد ازاں جلایا

گیا۔

Leave a Reply