میکسیکو، حملہ آوروں نے نائٹ کلب کو آگ لگا، 8 خواتین سمیت 23 افراد ہلاک

Spread the love

میکسیکو سٹی (جے ٹی این آن لائن مانیٹرنگ ڈیسک) میکسیکو نائٹ کلب آگ

میکسیکو کے ساحلی شہر میں حملہ آوروں نے شراب خانے ( نائٹ کلب ) کو آگ

لگا دی جس کے نتیجے میں 23 افراد زندہ جل کر ہلاک اور کئی جھلس کر شدید

زخمی ہو گئے۔

یہ بھی پڑھیں: میکسیکو، مسلح گینگ کی نائٹ کلب میں فائرنگ، 14افراد ہلاک

میڈیا رپورٹس کے مطابق حملہ میکسیکو کی ریاست ویراکروز کے ساحلی علاقے

میں واقع ایک نائٹ کلب پر کیا گیا- ہلاک ہونیوالوں میں 8 جبکہ آتشزدگی کے

باعث 13 شدید زخمی افراد میں کئی خواتین شامل ہیں-عینی شاہدین کا بتانا ہے کہ

حملہ آوروں نے شراب خانے کو آگ لگانے سے پہلے فائرنگ بھی کی۔

ریاست ویراکروز کے گورنر نے اس خدشے کا اظہار کیا ہے کہ شراب خانے ( نائٹ کلب )

میں آتشزدگی کے پیچھے گینگ لڑائی ہے۔ حملہ آوروں کی تلاش کے لیے چھاپے

مارنے سمیت واقعے کی تحقیقات کی بھی جا رہی ہیں۔

میکسیکو میں ایسے واقعات رونما ہونا معمول

میکسیکو میں ایسے واقعات رونما ہونا معمول ہے کیونکہ منشیات فروش اور دیگر

جرائم پیشہ گروہوں میں باہمی دشمنیوں کے باعث ایک دوسرے کے زیر تسلط

علاقوں میں اپنی ناک اونچی کرنے کیلئے حملہ آور ہوکر بے گناہ شہریوں کو

نشانہ بناتے اورانا کو تسکین پہنچاتے ہیں-

ایسا ہی ایک واقعہ میکسیکو کے شہر سلامانکا میں 8 اور 9 مارچ 2019 کی

درمیانی شب ایک نائٹ کلب میں پیش آیا جہاں متعدد گاڑیوں میں گینگسٹرز کا

گروپ کلب پہنچا اورکلب میں موجود افراد پر گولیوں کی بوچھاڑ کردی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق واقعے سے چند ہفتے قبل شہر بھر میں بینرز لگائے

گئے تھے کہ اگر سیکیورٹی فورسز نے علاقہ خالی نہیں کیا تو معصوم لوگ

مارے جائیں گے۔

مقامی میڈیا کے مطابق سانتا روزا ڈی لیما گینگ کا سربراہ جوز انتونیو نامی

شخص ہے جو مفرور ہے اور سیکیورٹی حکام اس کی تلاش میں ہیں کیونکہ سانتا

روزا گینگ عام طور پر ایندھن کی چوریاں کرتا ہے اور اسی سلسلے میں اس

گینگ کیخلاف کریک ڈاؤن کیا گیا تو جواب میں اس گینگ نے کلب پر حملہ کر

کے کئی شہریوں کو لقمہ اجل بنا دیا۔

میکسیکو نائٹ کلب آگ

Leave a Reply