sachi kahaniya jtnonline

میاں بیوی خوش مگر دونوں کے سسرالی طلاق پر بضد

Spread the love

دبئی، کوئٹہ (جے ٹی این آن لائن سچی کہانیاں) میاں بیوی خوش مگر

صوبہ سندھ کے شہر گوٹھ جاگیر ضلع شہداد کوٹ کے رہائشی مختار احمد ولد

حمل خان قوم چانڈیونے اپنی اہلیہ حسنہ بی بی کے ہمراہ خضدار پریس کلب میں

پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ میں نے تین سال قبل حسنہ خاتون سے شادی

کی جس سے مجھے دو بچے ہیں ہم میاں بیوی بخوشی اپنی زندگی گزار رہے ہیں

لیکن میرے سسرغلام نبی ولد غوث بخش اور انکے والد میری بیوی کے دادا محمد

شریف ولد پاندی خان بضد ہیں کہ میں اپنی اہلیہ کو طلاق دوں، اس موقع پر حسنہ

زوجہ مختار احمد نے کہا کہ میرے دادا مجھے طلاق دلوانے کے لئے جان سے

مارنے کی دھمکی دینے اورہر قسم کے حربے استعمال کر کے مجھے شدید ذہنی

پریشانی سے دو چارکر رہے ہیں، اس سازش میں انہیں مقامی بااثر افراد کی پشت

پناہی بھی حاصل ہے تاکہ مجھے طلاق دلواکر بھیڑ بکری کی طرح فروخت کر

سکیں-

=-،-= سچی کہانیوں کے عنوان کے تحت مزید سٹوریز ( =،= پڑھیں =،=)

مختار احمد چانڈیو نے کہا کہ ہم میاں بیوی نے عین شرعی تقاضے پوری کر کے

شادی کی ہے، نکاح نامہ سمیت تمام عدالتی دستاویزات ہمارے ساتھ موجود ہیں،

مختار احمد نے کہا کہ میں نے اس سے پہلے ایک شادی کی ہے جس سے مجھے

چھ بچے ہیں، میرے سسر نے میرے بچوں کو بھی اپنی تحویل میں لے رکھا ہے

اور گوٹھ جاگیر ضلع شہداد کوٹ میں میری زرعی اراضی اور ایک ٹریکٹر پر

بھی قبضہ جما رکھا ہے، مختار احمد نے کہا کہ ہمیں اپنے سسر غلام نبی اور ان

کے والد محمد شریف علاقے کے چند بااثر افراد کیساتھ مل کر جان سے مار دیں

گے- انہوں نے کہا کہ ہم اپنی جان بچانے اور روزگار کے سلسلے میں وڈھ میں

رہائش پذیر ہیں-

=-= قارئین کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

دونوں میاں بیوی نے وزیراعلیٰ بلوچستان میر جام کمال، چیف جسٹس بلوچستان

ہائی کورٹ، سردار اختر مینگل اور پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو جبکہ

کمشنر قلات ڈویژن اور ڈپٹی کمشنر خضدار سے اپیل کی کہ وہ ان کے بچوں کو

انکے حوالے کرانے، بیوی کو زبردستی طلاق دلوانے اور جان و مال کو تحفظ

دینے میں کردار ادا کریں-

میاں بیوی خوش مگر

Leave a Reply