0

مودی سرکار کیخلاف اپوزیشن جماعتوں کا ”متحد انڈیا“ ملین مارچ ، 5لاکھ افراد کی شرکت

Spread the love

بھارت کی ریاست مغربی بنگال کے عالمی شہرت یافتہ شہرکلکتہ میں اپوزیشن جماعتوں کے 5لاکھ سے زائد کارکنوں اور حمایتوں نے وزیراعظم نریندر مودی کےخلاف ”متحد انڈیا “ ریلی میں شرکت کر کے بی جے پی کیلئے ایک اور خطرے کی گھنٹی بجا دی ، سیاسی تجزیہ کاروں نے اس ریلی کو عام انتخابات سے قبل اب تک کی سب سے بڑی ریلی قرار دیتے ہوئے کہا ہے مودی کیلئے آئندہ عام انتخابات وقت گزرنے کےساتھ ساتھ مشکل سے مشکل تر ہوتے جا رہے ہیں،پولیس کے مطابق کلکتہ میں ریلی کی سکیورٹی کیلئے 5 ہزار افسران کی اضافی نفری موجود تھی،اس حوا لے سے بتایا گیا کہ اپوزیشن لیڈروں کی تقایر دیکھانے کیلئے 20 بڑی اسکرین نصب کی گئیں۔ مغربی بنگال ریاست کلکتہ کی وزیر اعلیٰ ممتا بینر جی نے کہا مودی حکومت کی تاریخ تنسیخ گزر چکی ہے ،واضح رہے متحدہ انڈیا ریلی وزیراعلیٰ مغربی بنگال کی حکومت نے منعقد کی جس میں تقر یباً 4 لاکھ لوگوں کی آمد متوقع تھی تاہم کلکتہ پولیس کے چیف رجیو کمار نے بتایاتقریباً 5 لاکھ افراد نے شرکت کی۔متحد انڈیا ریلی کے بارے میں وزیراعظم نریندر مودی نے الزام لگایا کہ اپوزیشن اپنے ذاتی مفاد کےلئے سارے کام کررہی ہے،ریاست گجرات میں عسکری ہارڈ ویئر کا جائزہ لیتے ہوئے انہوں نے کہا اپوزیشن کا اتحاد میرے نہیں بلکہ بھارت کےخلاف ہے۔

Leave a Reply