107

مودی سرکار کا مقبوضہ کشمیر میں50 ہزار مندر کھولنے کااعلان ،کرفیو بدستور جاری

Spread the love

سرینگر، واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) مقبوضہ وادی میں مسلمانوں کو اقلیتوں میں

بدلنے کا منصوبہ، آرٹیکل 370 کے خاتمے اور وادی میں جبری پابندیوں کو 51

روز مکمل ہوگئے ، کشمیری عوام بدترین قیدیوں کی زندگی گزارنے پر مجبور

ہیں، ادھرمودی سرکار نے وادی میں 50 ہزار مندر کھولنے اور مورتیاں رکھنے

کا منصوبہ بنا لیا۔ مواصلاتی رابطے منقطع، دکانیں، کاروبار، تعلیمی ادارے بند،

روزمرہ کی اشیاء اور ادویات کی ختم ہوچکی ہیں ۔ ٹی وی چینلز اور اخبارات کی

بندش بھی جاری ہے۔بھارتی میڈیا کے مطابق مقبوضہ کشمیر کا خصوصی درجہ

ختم کرنے کے بعد مودی سرکار نے وادی میں کئی سال سے بند مندروں کے

دروازے پھر سے کھولنے اور پوجا کرنے کی تیاریاں شروع کر دیں۔ بھارتی

وزیرمملکت برائے داخلہ جی کشن ریڈی کے مطابق وادی میں 50 ہزار مندر

کھولیں جائیں گے۔دوسری طرف 15سالہ طالب علم فوجی کیمپ میں تشدد سے شہید

ہوگیا،پلوامہ کے یاور احمد کو پتھرائو کے الزام میں حراست میں لیا گیا تھا، بھارتی

فوجی نیم مردہ حالت میں گھر کے باہر پھینک گئے،بچے نیاسپتال پہنچ کر دم

توڑدیا ۔علاوہ ازیںامریکی سینیٹرشیروڈ برا ون نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی

کوخط لکھ کر مقبوضہ کشمیرکی صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔شیروڈ

بران نے کہا کہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پرتشویش ہے،

کشمیریوں کے تحفظ اورسلامتی کیلئے اقدامات کیے جائیں۔

Leave a Reply