منشیات کیس میں قید وجرمانہ کی سزا پرغیر ملکی ماڈل ٹریزا رو پڑی

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہور(جے ٹی این آن لائن) ایڈیشنل سیشن جج شہزاد رضا نے ساڑھے 8 کلو

منشیات کے مقدمہ میں ملوث چیک ریپبلک کی ماڈل گرل مجرمہ ٹریزا اہلسکو

کو8 سال 8 ماہ قیداورایک لاکھ 13ہزار روپے جرمانہ کی سزا کا حکم سنا دیا۔

مجرمہ 2 بار ضلع کچہری اور 100 بار سیشن عدالت میں پیش ہوئیں۔عدالتی حکم

سنتے ہی ملزمہ نے رونا شروع کردیا۔ جس پر ان کے وکلاء انہیں دلاسہ دیتے

رہے ۔عدالتی فیصلہ کے موقع پر چیک ریپبلک سفارت خانے کی ڈپٹی سیکرٹری

بھی موجود تھیں ۔عدالت نے مقدمہ کا فیصلہ 12مار چ 2019کو محفوظ کیا تھا جو

گزشتہ روز سنا یا گیا ۔ ملزمہ کو 10 جنوری 2018 کو لاہورایئر پورٹ سے کسٹم

حکام نے ساڑھے 8 کلو ہیروئن سمگل کرنے کی کوشش کرتے ہوئے گرفتار کیا

تھا۔ ملزمہ کے خلاف 9گواہان نے عدالت میں پیش ہو کر اپنے بیانات قلمبند

کروائے ۔ مذکورہ مقدمہ میں 4 مزید ملزمان بھی نامزد ہیں جن میں سے 3ملزم

اشتہاری جبکہ ایک ملزم شعیب گرفتار ہے۔ عدالتی فیصلے کے بعد ماڈل ٹریزا

نے کہا ان کے سامان سے کچھ نہیں ملا تھا ۔ مجھے پھنسایا گیا ہے ۔ پاکستان کے

لوگ اچھے ہیں مگر نظام بہت خراب ہے۔ ان کے وکیل نے کہا وہ اس فیصلے

کے خلاف اپیل کریں گے ۔ واضح رہے ماڈل ٹریزا دسمبر 2017ء میں پاکستان آئی

تھیں۔ وہ لاہور اور گوجرانوالہ میں رہائش پذیررہیں اور فیشن ملبوسات کی ماڈلنگ

کرتی رہیں ۔ پاکستان سے واپس جاتے ہوئے 10جنوری 2018 کولاہور ائیر پورٹ

سے انہیں گرفتارکیا گیا ۔ غیرملکی ٹریزا نے جیل میں قید کے دوران پاکستانی

کلچر پر دو کتابیں بھی لکھی ہیں۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply