ملز مالکان نےگنے کی نئی قیمتیں سندھ ہائی کورٹ میں چیلنج کر دی

Spread the love

شوگر ملز مالکان نے سندھ حکومت کی جانب سے مقرر کی گئی گنے کی نئی قیمتوں کو ہائیکورٹ میں چیلنج کردیا،عدالت نے شوگر ملز مالکان کو حکم امتناع دینے کی استدعا مسترد کردی۔ سندھ ہائیکورٹ کے جسٹس محمد علی مظہر نے شوگر ملز مالکان کی جانب سے سندھ میں گنے کی نئی قیمتوں کے تعین سے متعلق دائر درخواست پر سماعت کی۔شوگر ملز مالکان کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ گنے کی قیمتوں سے متعلق سندھ حکومت کا 7 دسمبر کا نوٹیفکیشن کالعدم قرار دیا جائے، صوبائی حکومت نے اجلاس میں مالکان کا موقف سنے بغیر گنے کے نرخ مقرر کیے۔ جس پر جسٹس محمد علی مظہر نے استفسار کیا کہ آپ نے کاشتکاروں کو پچھلے سال کی ادائیگی نہیں کی، حکم امتناع کیوں مانگ رہے ہیں۔سندھ اور پنجاب میں گنے کے یکساں نرخ مقرر کیے گئے- جج نے کہا کہ پھر کیا مسئلہ ہے، عدالت نے شوگر ملز مالکان کو حکم امتناع دینے کی استدعا مسترد کردی۔عدالت نے سیکرٹری زراعت کو 18 دسمبر کو طلب کرتے ہوئے کین کمشنر اور دیگر فریقین کو بھی آئندہ سماعت کے لیے نوٹسز جاری کردیے۔

Leave a Reply