مقبوضہ وادی میں مکمل ہڑتال،مظاہرے، 2 شہید طلبا سپرد خاک

Spread the love

سرینگر،نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوزایجنسیاں) جنوبی کشمیرمیں شہید ہونیوالے

دو کشمیری نوجوانوں بلا ل احمد بٹ اور راہل رشید شیخ کو سپرد خاک کردیا گیا۔

دونوں نوجوانوں کو ہفتے کے روز بھارتی فوج نے شوپیان کے مضافاتی علاقے

میں شہید کر دیا تھا۔ نماز جنازہ میں ہزاروں شہریوں نے شرکت کی اس موقع پر

بھارت مخالف اور آزادی کے حق میں نعرے لگائے گئے۔ نوجوان سڑکوں پرنکل

آئے اور انہوں نے بھارتی قابض فورسز پرپتھرائو کیا جنہیں منتشر کرنے کیلئے

شیلنگ اور ہوائی فائرنگ کی گئی اور یہ سلسلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا۔اس

دوران قصبہ شوپیان، کولگام اور امام صاحب علاقوں میں کاروباری و تجارتی

ادارے اور ٹریفک مکمل طور پر بند رہی جبکہ انتظامیہ نے انٹرنیٹ سروس بھی

بند کردی۔ سید ہلال اندرابی نامی نوجوان کو این آئی ائے نے گرفتار کر لیا۔

تحقیقاتی ایجنسی نے دعوی کیا کہ یہ چوتھا گرفتار نوجوان ہے جو سی آر پی ایف

پرحملے میں ملوث تھا ۔ جبکہ بھارت کے بد نام زمانہ اسی تحقیقاتی ادارے نے

ایک جھوٹے مقدمے میں پوچھ گچھ کے نام پر کل جماعتی حریت کانفرنس کے

چیئرمین سید علی گیلانی کے بیٹے ڈاکٹر نعیم گیلانی کو کل منگل کو نئی دہلی میں

اپنے ہیڈکوارٹر پر طلب کرلیا ہے۔ نعیم پیشے سے ایک ڈاکٹر ہیں۔ دوسری طرف

نئی دہلی کے گائوں گڑ میںہندوسینا کے کارکنوں نے مسلمانوں کی گوشت کی

دکانوں پر حملہ کر کے ڈھائی سو افراد کا کاروبار بند کرا دیا، علاقے میں شدید

کشیدگی کے باوجود انتظامیہ نے مجرمانہ خاموشی اختیارکئے رکھی.تنظیم کے

لیڈر نے ڈھٹائی سے اپنی کارروائی کو تسلیم بھی کیا۔

Leave a Reply