0

مریضوں کو بہتر علاج معالجے کی فراہمی حکومت کی اولین ترجیح ، وزیر صحت

Spread the love

وفاقی وزیر صحت عامر محمود کیانی نے کہا ہے کہ وزیر اعظم کے وژن کے مطابق اسلام آباد کے پمز ہسپتال کو جدید سہولیات سے آراستہ کیا جا رہا ہے ۔ پمز میں ویسٹ مٹیریل کو تلف کرنے کے لیے جدید ترین مشینیں نصب کر دی گئی ہیں ۔ اسلام آباد کو صحت کے حوالے سے ماڈل سٹی بنایا جائے گا۔ اسلام آباد میں 10 ارب روپے کی لاگت سے پہلی نرسنگ یونیورسٹی کا قیام عمل میں لا رہے ہیں انہوں نے پمز میں ویسٹ تلف کرنے والی مشین، مریضوں کے لواحقین کی زنانہ اور مردانہ انتظار گاہوں ، کینسر کے مریضوں کی کیمو تھراپی والی الگ وارڈ کارڈیالوجی کی فارمیسی اور تزین نو شدہ سرجیکل وارڈ کا افتتاح کرتے ہوئے کہی۔ وزیر صحت نے کہا کہ اسلام آباد کے تمام ہسپتالوں سمیت پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز (پمز) کے مریضوں کو بہتر علاج معالجے اور معیاری سہولیات کی فراہمی پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔وفاقی وزیر صحت نے کہا کہ پمز میں مریضوں کو بہترین سہولیات کی فراہمی کے لیے انفراسٹرکچر کی ترقی کے لیے کوشاں ہیں انہوں نے کہا کہ اب پمز میں فضلہ ٹھکانے والی جدید ترین مشینیں نصب کر دی گئی ہیں جس سے انفکیشن کا ممکنہ باعث بننے والے فضلے کو محفوظ طریقے سے موقع پر ٹھکانے لگا دیا جائے گا۔ ان مشینوں کی بدولت فضلہ ٹھکانے لگانے کی لاگت نہ صرف کم ہو جائے گی بلکہ ماحولیاتی تحفظ میں بھی مدد ملے گی۔ عامر محمود کیانی نے کہا کہ حکومت صحت کی سہولیات کو وسیع کرنے اور اس میں بہتری لانے کو ترجیح دیتی ہے اور پمزہسپتال کو جدید مشینری اور سہولیات سے آراستہ کیا جا رہا ہے اور مریضوں کے لیے جدید اور معیاری سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنا رہے ہیں ۔ سرطان کے مریضوں کے لیے نئے وارڈ کے افتتاح کے بعد اب ان مریضوں کے لیے بیڈز کی سو فیصد فراہمی کو یقینی بنا دیا ہے جبکہ یورالوجی اور پلاسٹک سرجری کروانے والوں کی لیے بھی سرجیکل وارڈوں کی نئے سرے سے تزئین و آرائش کر کے سہولیات کو بہتر بنا دیا ہے وزیر صحت نے کہا کہ کارڈیک سنٹر میں مریضوں کے تیمارداروں اور لواحقین کے لیے بھی انتظار گاہیں بنا دی ہے جس سے مریضوں کے لواحقین بہتر طریقے سے اپنے مریضوں کا خیال رکھ سکیں گے اوردل کے امراض میں مبتلا مریضوں کے لیے کارڈیک سنٹر میں مارمیسی بھی بنا دی گئی ہے۔ وفاقی وزیر صحت نے کہا کہ ہماری حکومت نرسوں کی استعداد سازی کو اپنا وژن سمجھتی ہے اور نرسنگ سیل بھی بنا دیا ہے، نرسنگ کا شعبہ صحت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے نرسنگ کے شعبہ کو مضبوط کرنے کے لیے تمام تر اقدامات کئے جا رہے ہیں اور 10 ارب روپے کی لاگت سے اسلام آباد میں نرسنگ یونیورسٹی بنا رہے ہیں۔

Leave a Reply