لکی مروت دہشتگرد حملہ، شہید پولیس اے ایس آئی،3 کانسٹیبل سپرد خاک 0

لکی مروت دہشتگرد حملہ، شہید پولیس اے ایس آئی،3 کانسٹیبل سپرد خاک

Spread the love

پشاور(بیورو چیف، عمران رشید خان) لکی مروت دہشتگرد حملہ

Journalist Imran Rasheed

خیبرپختونخوا کے جنوبی ضلع لکی مروت میں دہشت گردوں کی فائرنگ سے

شہید ہونیوالے پولیس اے ایس آئی یعقوب خان، کانسٹیبل ڈارئیور رحیم اللہ نارو

خیل، کانسٹیبل انعام اللہ عسیٰ خیل اور کانسٹیبل مستقیم شاہ پہاڑ خیل کی نماز

جنازہ پولیس لائن لکی مروت میں ادا کردی گئی۔ پولیس کے چاق وچوبند دستے

نے شہداء کو سلامی پیش کی۔ نماز جنازہ میں ڈپٹی کمشنر اقبال حسین، ڈی پی او

شہزادہ عمر عباس بابر، ایس پی انوسٹی گیشن شفیق خان وزیر، ڈی ایس پی

نورنگ مراد خان، سماجی شخصیات، دیگر پولیس افسران اور اہلکاروں نے کثیر

تعداد میں شرکت کی۔

لکی مروت دہشتگرد حملہلکی مروت دہشتگرد حملہ

=-،-= خیبر پختونخوا سے متعلق مزید خبریں (=-= پڑھیں =-=)

لکی مروت دہشتگرد حملہلکی مروت دہشتگرد حملہ

ڈی پی او لکی شہزادہ عمر عباس بابر، ڈپٹی کمشنر اقبال حسین اور دیگر نے

شہداء کے اجساد خاکی پر پھول چڑھائے، ایصال ثواب اور بلندی درجات کے

لئے دعائیں کیں۔ اس موقع پر ڈی پی او شہزادہ عمر عباس بابر نے پسماندگان کو

تسلی دیتے ہوئے یقین دلایا واقعے میں ملوث افراد کو جلد گرفتار کیا جائیگا اور

انہیں اپنے منطقی انجام تک پہنچایا جائے گا۔ بعدازاں چاروں شہداء کی میتیں

پولیس کے اسپیشل سکواڈ کے ہمراہ ان کے آبائی علاقوں کو پہنچائی گئیں، جہاں

شہداء کو پورے سرکاری اعزاز کیساتھ آبائی قبرستان میں سپرد خاک کیا گیا۔

=-،-= وزیراعلیٰ محمودخان کی لکی مروت دہشتگرد واقعہ کی شدید مذمت

لکی مروت دہشتگرد حملہ

وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمودخان نے لکی مروت میں نامعلوم افراد کی طرف

سے پولیس موبائل پر فائرنگ کے واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت، اور پولیس

حکام کو واقعے میں ملوث عناصر کی فوری گرفتاری کیلئے ضروری اقدامات

اُٹھانے کی ہدایت کی ہے۔ وزیراعلیٰ نے واقعے میں چار پولیس اہلکاروں کی

شہادت پر تعزیت کا اظہار کیا اور اپنے جاری کردہ تعزیتی بیان میں مرحومین

کے درجات کی بلندی و پسماندگان کیلئے صبر جمیل کی دُعا کی۔ وزیراعلیٰ نے

شہداء کے اہلخانہ سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے کہا پوری صوبائی

حکومت متاثرہ خاندانوں کے غم میں برابر کی شریک ہے۔ صوبے میں امن و

امان کو بحال کرنے، شہریوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے پولیس اہلکاروں

نے لازوال قربانیاں دی ہیں۔ جسے کسی صورت رائیگاں نہیں جانے دیا جائیگا-

=-،-= ٹی ٹی پی نے دہشتگرد حملے کی ذمہ داری قبول کر لی

ڈپٹی کمشنر لکی مروت اقبال حسین کے بدھ کی رات موبائل پر پولیس اہلکار

معمول کی گشت پر تھے، موٹرسائیکل پر سوار نامعلوم مسلح افراد نے لکی

مروت میانوانی روڈ پر وانڈا میر عالم کے علاقہ میں ان کی گاڑی پرفائرنگ کی

اور موقع سے فرار ہو گئے، جن کی گرفتاری کیلئے علاقہ میں سرچ آپریشن

شروع کر دیا گیا ہے۔ واقعے کے بعد پولیس کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر

پہنچ گئی اور علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ مفرور ملزمان کو پکڑنے کیلئے

ضلع کے تمام داخلی و خارجی راستوں پر پولیس کا کڑا پہرہ لگا دیا گیا ہے۔

پولیس کے مطابق جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے اور عینی شاہدین کے بیانات

ریکارڈ کر لئے گئے ہیں- ادھر کالعدم دہشت گرد گروہ تحریک طالبان پاکستان

نے مقامی میڈیا کو ارسال کردہ ایک بیان میں حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے،

تاہم ابھی تک سرکاری سطح پر اس کی کوئی تصدیق نہیں کی گئی۔

لکی مروت دہشتگرد حملہ ، لکی مروت دہشتگرد حملہ ، لکی مروت دہشتگرد حملہ

لکی مروت دہشتگرد حملہ ، لکی مروت دہشتگرد حملہ ، لکی مروت دہشتگرد حملہ

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply