قلندرز منزل کے قریب

قلندرز منزل کے قریب پہنچ کر ہمت ہار گئے

Spread the love

قلندرز منزل کے قریب

ابوظبی(جے ٹی این آن لائن نیوز)باؤلرز کی عمدہ کارکردگی کی بدولت کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے لاہور

قلندرز کو 18رنز سے شکست دے دی۔ابوظبی میں کھیلے گئے

میچ میں لاہور قلندرز نے ٹاس جیت کر کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو بیٹنگ کی دعوت دی۔

گلیڈی ایٹرز کی اننگز کا آغازاچھا نہ تھا. میچ کے دوسرے ہی اوور میں جیمز فالکنر نے

عثمان خان کو پویلین کی راہ دکھا دی۔4 رنز پر پہلی وکٹ گرنے کے بعد ویدرلڈ کا ساتھ دینے کیمرون

ڈیلپورٹ آئے اور دونوں نے دوسری وکٹ کے لیے 48رنز جوڑے، اس شراکت کا خاتمہ راشد خان

نے کیا۔ابھی گلیڈی ایٹرز اس نقصان سے سنبھلی بھی نہ تھی کہ حفیظ نے 48 رنز بنانے والے ویدرلڈ

کی اننگز کا خاتمہ کردیا۔اس کے بعد اعظم خان نے وکٹ پر آتے ہیں جارحانہ انداز اپنایا اور حارث

رؤف کو ایک ہی اوور میں 4 چوکے لگائے۔تاہم بہترین آغاز کے باوجود اعظم اس موقع سے فائدہ نہ

اٹھا سکے اور 33 رنز بنانے کے بعد جیمز فالکنر کی وکٹ بن گئے جبکہ اسی اوور میں آسٹریلین

باؤلر نے نواز کو بھی چلتا کردیا۔اختتامی اوورز میں سرفراز احمد نے چند بڑے شاٹس لگائے جس کی

بدولت کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے 5 وکٹوں کے نقصان پر 158 رنز بنائے۔سرفراز احمد نے 27 گیندوں پر

34 رنز کی اننگز کھیلی، جیمیز فالکنر نے 25 رنز کے عوض 3 وکٹیں حاصل کیں۔ہدف کے تعاقب

میں لاہور قلندرز کی ٹیم ابتدا سے ہی مشکلات سے دوچار ہو گئی اور اننگز کی دوسری ہی گیند پر

کپتان سہیل اختر کی اننگز عثمان شنواری کے ہاتھوں اختتام کو پہنچی۔فخر زمان اور ذیشان اشرف نے

اسکور کو 23 تک پہنچایا ہی تھا کہ محمد حسنین نے اوپننگ بلے باز کی وکٹیں بکھیر دیں تاہم قلندرز

کو اصل دھچکا اس وقت لگا جب تجربہ کار محمد حفیظ ایک مرتہ پھر ناکامی سے دوچار ہو کر

شنواری کی دوسری وکٹ بن گئے۔اسکور 39 تک پہنچا تھا کہ خرم شہزاد نے 16 رنز بنانے والے

ذیشان اشرف کو چلتا کردیا جبکہ بین ڈنک بھی چھ رنز بنانے کے بعد محمد نواز کا نشانہ بنے۔آؤٹ

ہونے سے قبل بین ڈنک کو دو مواقع ملے لیکن وہ ان سے فائدہ نہ اٹھا سکے، ایک موقع پر سرفراز ان

کا وکٹوں کے عقب میں کیچ نہ تھام سکے جبکہ وکٹوں کے درمیان غلط فہمی کے نتیجے میں وہ آؤٹ

ہونے سے بال بال بچے۔راشد خان اور احمد دانیال بھی مشکل وقت میں ٹیم کے کام نہ آئے اور

بالترتیب 8 اور تین رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹ گئے۔66 رنز پر 7 وکٹیں گرنے کے بعد ٹم ڈیوڈ کا

ساتھ دینے جیمز فالکنر آئے اور دونوں نے آٹھویں وکٹ کے لیے 39 رنز جوڑے۔ٹم ڈیوڈ نے 27

گیندوں پر 3 چھکوں اور 4 چوکوں کی مدد سے 46 رنز بنائے لیکن ان کی اننگز بھی عثمان شنواری

کے ہاتھوں اختتام کو پہنچی۔اختتامی اوورز میں قلندرز کے باؤلرز نے چند بڑے شاٹس کھیل کر اپنی

ٹیم میچ کو سنسنی خیز بنا دیا لیکن گلیڈی ایٹرز نے میچ میں فتح اپنے نام کر لی۔لاہور قلندرز کی

پوری ٹیم 140 رنز پر ڈھیر ہو گئی، گلیڈی ایٹرز کی جانب سے عثمان شنواری اور خرم شہزاد نے

تین، رین جبکہ حسنین اور نواز نے دو، دو وکٹیں حاصل کیں۔

قلندرز منزل کے قریب

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply