Taliban

امریکی صدر نے غیرملکی فوجیوں کے انخلا ء کے متعلق مبہم بیان دیا، طالبان

Spread the love

فوجیوں کے انخلا ء

کابل(جے ٹی این آن لائن نیوز) افغان طالبان نے امریکی فوج کے افغانستان سے انخلا کے حوالے سے

امریکی صدر کے بیان پر اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ امریکی صدر نے دوحہ معاہدے اور غیرملکی

فوجیوں کے انخلا سے متعلق مبہم بیان دیا۔ میڈیارپورٹس کے مطابق طالبان رہنماء کا کہنا تھا کہ بعض

نیٹو ممبر بھی افغانستان میں قیام کی توسیع کے خواہاں ہیں۔ دوحہ معاہدہ پرامن افغانستان کے قیام کے

لیے دانشمندانہ اور مختصر ترین راستہ ہے۔ دوحہ معاہدہ 20 سالہ جنگ کے خاتمے کے لیے مختصر

ترین راستہ ہے۔ امارات اسلامی معاہدے میں کیے گئے اپنے وعدوں پر مضبوطی سے کار بند ہے۔

طالبان نے کہا کہ چاہتے ہیں امریکا بھی دوحہ معاہدے پر مضبوطی سے کار بند رہے۔ امریکا جنگ

چاہنے والے حلقوں کے اکسانے کی وجہ سے تاریخی موقع ضائع نہ کرے۔ طے شدہ تاریخ پر تمام

فوجی نہ نکلے تو یہ امریکا کی جانب سے معاہدے کی خلاف ورزی سمجھی جائیگی۔طالبا ن نے کہا

کہ معاہدے کی خلاف ورزی کی ذمہ داری امریکا پر ہوگی۔ جس سے امریکا کے عالمی تاثر کو

نقصان بھی پہنچیگا۔ معاہدے کی خلاف ورزی پر مجاہدین اپنیمذہب اور وطن کے دفاع پر مجبور ہوں

گے۔افغان طالبان کے مطابق معاہدے کی خلاف ورزی پر مجاہدین اپنا جہاد جاری رکھیں گے۔ اور

مجاہدین معاہدیکی خلاف ورزی پر غیرملکی فورسز کے خلاف مسلح جدوجہد جاری رکھیں گے۔

فوجیوں کے انخلا ء

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply